November 21, 2018

آندھراپردیش طوفان تتلی کے اثر سے نکل رہا ہے باہر

آندھرا پردیش 22 اکتوبر/ آندھراپردیش کے حال ہی میں آئے طوفان تتلی سے شدید طورپر متاثر اضلاع سریکاکلم اور وجیانگرم میں حالات کو معمول کی طرف لانے کیلئے اقدامات تیزی کے ساتھ جاری ہے۔اس طوفان کے سبب سریکاکلم ضلع میں ہی نقصانات کا اندازہ 3500کروڑ روپئے سے زائد کا لگایا گیا ہے۔ضلع کے 35منڈلوں میں سے 23منڈل شدید طرح متاثر ہوئے ہیں۔اطلاعات میں کہا گیا ہے کہ 442دیہات اور 6بلدیات طوفان سے شدید طور پرمتاثر ہوئے ہیں۔ضلع کے افسروں نے کہاکہ 40ہزار 480مکانات بُری طرح تباہ ہوگئے ہیں اور مزید ڈھائی ہزار مکانات کو جزوی نقصان پہنچا ۔16ہزار 447ہیکٹر زمین پر پھیلی فصلوں کو نقصان پہنچا اور بجلی کی سپلائی کا نٹ ورک تباہ ہوگیا۔ سریکاکلم اور وجیانگرم کے 1820مواضعات میں عوامی اور سرکاری املاک کو نقصان پہنچا ہے۔ تتلی طوفان کے سبب جملہ نقصان 3,435.29 کروڑ روپئے کا ہوا ہے جس میں بجلی کا 505.05 کروڑ‘ عمارات و شوارع کا 406.32 کروڑ‘پنچایت راج و دیہی ترقی کا 140.55کروڑ‘ زراعت کا 802.13کروڑ‘ باغبانی کا 100کروڑ‘ افزائش مویشیاں کا 50کروڑ‘ سمکیات کا 50کروڑ‘ دیہی سربراہی آب کا 100کروڑ‘ آبپاشی کا 100کروڑ‘ مکانات کو 220.49کروڑ کا نقصان ہوا ہے۔ انسانی جانوں کے اتلاف پر 55لاکھ روپے کا ایکس گریشیا دیا گیا۔ سیول سپلائز کا 50لاکھ‘ صحت و طبابت کا 1.07کروڑ‘ بلدی نظم و نسق و سینی ٹیشن کا 8.58کروڑ روپے کا نقصان ہوا ہے

Post source : Urduleaks news network