November 21, 2018

کامرس سکریٹری ہند- چین تجارت میں توازن کے لئے کوشاں

نئی دہلی، 6نومبر   2018/کامرس  سکریٹری  ڈاکٹر  انوپ ودھوان نے  آج  چین کے شہر شنگھائی میں   چین کے  نائب وزیرا عظم اور وزیر تجارت جناب   وانگ شوون  کے ساتھ    باہمی  ملاقات کی ہے۔  کامرس سکریٹری کے ہمراہ محکمہ تجارت،   محکمہ خوراک اور سرکاری تقسیم  کے اعلی حکام ، بیجنگ میں  ہندستان کی سفارتخانے کے افسران   نیز قونصلیٹ   کے افسران   بھی تھے۔   یہ دورہ کرنے  والے ہندستانی وفد  میں  اے پی  ای ڈی اے، کے  چیئرمین ، نیفیڈ (این اے ایف ای ڈی) کے ایم ڈی   ، ایف آئی ای او  کے   ڈائریکٹر جنرل  ، فارمیکسل  کے  ڈائریکٹر جنرل   شامل تھے۔

ڈاکٹر ودھوان نے  اس ملاقات کے دوران جہاں   تجارت میں   بہت زیادہ کمی   پر تشویش پر ظاہر کی وہیں حکومت چین کی کوششوں کا  اعتراف کیا جہاں مارکیٹ تک رسائی میں حائل   چند رکاوٹوں جیسے  چاول اور ریپسیڈ  کے معاملے میں  کچھ  نرمی  کی کوشش کی ہے اور انہوں نے  سویا بین   اور انار نیز ان سے متعلق   معاملات پر پیش رفت پر اطمینان ظاہر کیا۔    انہوں نے جناب وان کو   ہندستانی سفارت اور قونصلیٹ  کے ذریعہ   کاربار کو فروغ  دینے   کے معاملات جیسےچینی، چاول ، چائے اور خوردنی تیل  جیسی مصنوعات   کے سلسلہ میں حوصلہ افزا کے ردعمل کے بارے میں بتایا۔  ڈاکٹر ودھوان نے جناب وان سے  ہندستان   سے ان اشیا کے درآمد کاروں کو ایم او ایف سی او ایم رہنمائی مہیا کرنے کی اپیل کی ۔

کامرس سیکریٹری نے مزید بتایا کہ   زرعی پیداوار  ، فارماسیٹیکل  ، اطلاعاتی ٹکنالوجی  سروسیز  اور سیاحت  جس میں   ہندستان نے اپنی صلاحیت اور عالمی سطح پر نمایاں موجودگی   ثابت کی ہے لیکن       چین میں ان کی موجودگی  نہ کے برابر ہے۔ اس لئے    باہمی تجارت کی حوصلہ افزائی کی ضرورت ہے۔  ڈاکٹر ودھوان نے چین کے ان شعبوں   میں ہندستان کے ماہرین کے لئے    مناسب ماحول  کی غرض سے متعلقہ شراکت داروں کی رہنمائی  سہولت  مہیا کرانے  امداد اور تعاون کی بھی اپیل کی۔

ایم او ایف سی او ایم نے  پہلے سی آئی آئی ای میں  شرکت کی اس کی دعوت قبول کرنے کے لئے  ہندستان کا شکریہ ادا کیا اور  چین میں  ہندستان کی برآمدات کو بڑھانے میں ہر قسم کی مدد کی یقین دہانی کرائی۔

 حال ہی میں ہندستان اور چین نے باہمی تجارت  کے موضوعات پر  تبادلہ خیال کے لئے   افسران کی سطح پر کئی ملاقاتیں ہوئی ہیں۔   مارچ 2018 میں  ہندستان کے وزیر تجارت کی میزبانی میں  مشترکہ اقتصادی گروپ   کی میٹنگ کے کامیاب انعقاد اور   چین کے وزیر تجارت کے شرکت کے بعد    دونوں ملکوں نے   مارکیٹ تک رسائی کے   زیرالتوا   معاملات  کے حل کے لئے   سرکاری سطح پر دو دور کے مذاکرات ہوچکے ہیں۔

اب اس دورے کے دوران کامرس سکریٹری نے چین کے شوگر ایسوسی ایشن    سمیت  چین کے چینی کے اہم درآمدکاروں کے ساتھ تفصیلی تبادلہ خیال کیا تھا اور ان میں ہندستان کے چینی کے شعبے کے بارے میں بتایا کہ کہ پائیدار طویل مدتی بنیاد پر    چین کی  چینی کی ضروریات کی تکمیل کے لئے ہندستان کے پاس معیار اور مقدار دونوں کے لحاظ سے وافر مقدار موجود ہے۔    یہ ملاقاتیں   ہندستان کی چینی کے لئے    اس بڑ ے درآمداتی  مارکیٹ   میں داخلے کے لئے مفید  ہوں گے۔

کامرس سکریٹری نے 4 نومبر 2018 کو  سی آئی آئی  کے  افتتاح کے موقع پر   چین کے صدر زی زن پنگ  کے ذریعہ دی گئی ضیافت میں شرکت کی اور انہوں نے 5 نومبر  2018 کو ایکسپو کی افتتاحی تقریب میں بھی شرکت کی۔

Post source : pib