July 16, 2019

یونانی ڈاکٹرس کیلئے سنہراموقع حکومت نے بی یو ایم ایس ڈاکٹروں کو بھی اہل قرارد یا، مسلم ڈاکٹروں کو موقع سے فائدہ اٹھانا چاہئے، مولانا حلیم اللہ قاسمی

یونانی ڈاکٹرس کیلئے سنہراموقع حکومت نے بی یو ایم ایس ڈاکٹروں کو بھی اہل قرارد یا، مسلم ڈاکٹروں کو موقع سے فائدہ اٹھانا چاہئے، مولانا حلیم اللہ قاسمی

ممبئی 24 جون( پریس نوٹ)بی یو ایم ایس کے ذریعہ پڑھائی مکمل کرکے طبی خدمات انجام دینے والے مسلم ڈاکٹروں کے ساتھ سوتیلا سلوک کیئے جانے والے مرکزی و مہاراشٹر حکومت کے فیصلہ کے خلاف ڈاکٹروں نے جمعیۃ علماء مہاراشٹر (ارشدمدنی) کے توسط سے ممبئی ہائی کورٹ میں پٹیشن داخل کی تھی جو زیر سماعت ہے لیکن اسی درمیان حکومت نے سرکاری ویب سائٹ پر اعلان ظاہر کیا کہ بی یو ایم ایس ڈاکٹروں کی بھی بھرتی کی جائے گی اور ان سے درخواستیں طلب کی ہیں۔
ویب سائٹ پر ظاہر کیئے گئے اعلان کے تناظر میں جمعیۃ علماء مہاراشٹر (ارشد مدنی) کے جنرل سیکریٹری مولانا حلیم اللہ قاسمی نے نے بی یو ایم ایس ڈاکٹروں سے اپیل کی ہے وہ جلد از جلد کاغذی کارروائی مکمل کریں اور حکومت کی جانب سے دی گئی سہولیات سے استفادہ حاصل کریں۔فارم بھرنے کی آخری تاریخ 2/ جولائی ہے لہذا کمیونیٹی کے بی یو ایم ایس ڈاکٹروں کو بہ عجلت مظاہرہ کرتے ہو ئے بڑے پیمانے پر اس سنہرے موقع سے فائدہ اٹھانے کی ضرورت ہے۔
انہوں نے مزید کہاکہ یونانی ڈاکٹروں کے لیئے ہائی کورٹ میں قانونی لڑائی جاری  ہے (سول رٹ پٹیشن 7778/2018 ہائی کورٹ میں زیر سماعت ہے)لیکن اب جبکہ حکومت نے از خود بی یو ایم ایس ڈاکٹروں کے تعلق سے عبوری فیصلہ کیا ہے، ہمارے ڈاکٹروں کو اس اسکیم سے فائدہ اٹھانا چاہئے۔
مولانا حلیم اللہ قاسمی نے کہا کہ سرکاری ویب سائٹ کے مطابق کمیونیٹی ہیلتھ آفیسر کے لیئے حکومت نے ممبئی سمیت مہاراشٹر کے کل 22 / اضلاع میں 5/ ہزار 716 / خالی اسامیوں کو پر کرنے کے لیئے عریضہ طلب کیئے ہیں اور ۲/ جولائی تک کاغذی کارروائی مکمل کیئے جانے کا حکم جاری کیاہے۔

Post source : press note