October 23, 2019

جامعہ ملیہ اسلامیہ کے سول سروسز کوچنگ کے لئے تقریباً 14 ہزار درخواستیں موصول

نئی دہلی -9 جولائی ( پریس ریلیز) جامعہ ملیہ اسلامیہ کے رہائشی کوچنگ اکیڈمی، یو پی ایس سی سول سروسیز 2020 کے لئے 13129درخواستیں موصول ہوئیں جبکہ گذشتہ سال 7245لوگوں نے درخواستیں دی تھیں، اس کے مطابق امسال تقریبا 80 فیصد کی بڑھوتری ہوئی،حالانکہ آر سی اے میں محض 150امیدواروں کی گنجائش ہے۔ 

 

ایم اے فاروقی ریٹائرڈ آئی اے ایس، آر سی اے کے ڈائریکٹر نے درخواستوں کی اس بڑھوتری کو جامعہ ملیہ اسلامیہ کے بہترین تعلیمی ماحول، قابل و با صلاحیت اساتذہ کی کامیابی اور کوشش کا نتیجہ قرار دیا۔ 

 

یہاں یہ ذکر کیا جاسکتا ہے کہ 2018 سول سروسز امتحان کے تیسرے ٹاپر جنید احمد نے آرسی اے سے ہی تربیت لی تھی۔ 2018 میں آر ایس سی سے کوچنگ اور تربیت پانے والے تقریبا 43 امیدوارتھے۔ ان میں سے 29 آرسی میں رہائش پذیر تھے اور 14 نے اوری اینٹیشن پروگرام کے تحت انٹرویو کی تربیت حاصل کی تھی۔ جس میں ماہرین کے ذریعے انٹرویو کرایا جاتا اور امیدواروں کو فیڈ بیک بھی دیا جاتا ہے۔ 

 

2010سے اب تک جب سے اس کوچنگ کا قیام عمل میں آیا ہے جامعہ سے تقریبا 200 سول سرونٹ نکل چکے ہیں جبکہ دیگر سروسیز کے لیے تقریبا 250طلباء کامیا ب ہو چکے ہیں۔ 

 

بتا تے چلیں کہ ریسی ڈینشئل کوچنگ سینٹر کا قیام یو جی سی تحت 2010 میں عمل میں آیا تھا جس کا مقصد ایس سی ایس ٹی، اقلیتی طبقہ جات اور خواتین کے لئے ترقی کی راہیں ہموار کرنا تھا۔ اس کوچنگ میں داخلہ میں تحریری امتحان اور اس میں کامیابی کے بعد انٹرویو کی بنیاد پر ہوتا ہے۔ 

 

آر سی اے جدید تکنالوجی سے لیس شخصیت کے ارتقاء پر مبنی بہترین سہولیات فراہم کرتا ہے۔ جس میں امتحانات کے مختلف مراحل میں طلباء کی رہنمائی کی جاتی ہے۔ مین اور انٹرویو میں پانچ سو گھنٹوں پر مشتمل کلاسیں اور اسپیشل لیکچرز وغیرہ شامل ہوتی ہیں۔ ان کے علاوہ آر سی اے کی لائبریری بھی چوبیسوں گھنٹے کھلی رہتی ہیں جس میں وائی فائی،اے سی اور کتابوں وغیرہ کی سہولیات موجود ہوتی ہیں۔ یہ طلباء کو محفوظ اور پر سکون ماحول فراہم کرتا ہے۔ 

 

Post source : urduleaks news network