August 11, 2020

ہریانہ میں 35 مسلمانوں نے ہندو مذہب اختیار کرلیا !

ہریانہ میں 35 مسلمانوں نے ہندو مذہب اختیار کرلیا !

نئی دہلی -24 جون ( اردو لیکس ڈیسک) ہریانہ میں پانی پت کے پاس ایک مسلمان نوجوان نے اپنے خاندان و رشتہ داروں کے 35 افراد کے ساتھ ہندو مذہب اختیار کرلیا۔ یہ افسوسناک واقعہ پانی پت کے قریب واقع اسن گاوں میں پیش آیا ۔میڈیا اطلاعات کے مطابق اسن گاوں سے تعلق رکھنے والا 35 سالہ نصیب گزشتہ 9 سال سے اتراکھنڈ کے ہریدوار مندر میں تپسیا کی تھی اور اپنی تپسیا ختم کرنے کے بعد وہ چند روز قبل ہی گاوں واپس ہوا اور اپنے خاندان اور رشتہ داروں کو ہندو مذہب قبول کرنے کا مشورہ دیا ۔نصیب کے مشورہ پر تقریبا 35 مسلمان جو نصیب کے افراد خاندان اور رشتہ دار بتاے جا رہے ہیں نے مذہب تبدیل کرنے پر رضا مند ہوگئے ۔نصیب نے ہندو یوا واہنی تنظیم کے تعاون سے گاوں کی ایک مندر کے احاطے میں اپنے 35 مسلمانوں کے ساتھ ہندو مذہب اختیار کیا۔ مذہب تبدیل کرنے والوں نے بتایا کہ انہوں نے رضاکارانہ طور پر ہندو مذہب اختیار کیا ہے۔ ان افراد نے الزام عائد کیا کہ اورنگ زیب کے دور میں ، ان کے خاندان کے بزرگوں پر دباؤ ڈالتے ہوئے ان کا مذہب تبدیل  کیا گیا تھا 

Post source : Urduleaks