July 11, 2020

ٹک ٹاک پر پابندی – کمپنی کے سربراہ نکھل گاندھی کا ردعمل

ٹک ٹاک پر پابندی – کمپنی کے سربراہ نکھل گاندھی کا ردعمل

 

نئی دہلی-30 جون ( اردو لیکس) حکومت ہند کی جانب سے ٹک ٹاک سمیت 59 ایپس پر پابندی عائد کرنے کے احکامات جاری کرنے کے بعد ٹک ٹاک کمپنی نے اپنا ردعمل ظاہر کیا ہے۔ ٹک ٹاک انڈیا کے سربراہ نکھل گاندھی نے وضاحت کی کہ انہوں نے چین سمیت کسی بھی ملک کی حکومت کو اپنے صارفین کا ڈیٹا نہیں دیا اور مستقبل بھی نہیں دیں گے۔ نکھل گاندھی نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا  کہ بھارت کے قوانین ، ڈیٹا کی رازداری، اور سکیورٹی کے تمام ضابطوں پر کمپنی عمل پیرا ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انہیں مرکزی حکومت کی طرف سے اس مسئلے پر بات کرنے کے لئے مدعو کیا گیا ہے۔ اس بات چیت میں وہ حکومت ہند سے تبادلہ خیال کرتے ہوئے ان کے شکوک و شبہات دور کریں گے۔ صارفین کی رازداری اور مک کی سالمیت کو برقرار رکھنے کی اولین ترجیح دی جائے گی ۔حکومت کی پابندی کو ایک عارضی حکم نامہ قرار دیتے ہوئے گاندھی نے کہا کہ ٹک ٹاک کو ہندوستان کے14 زبانوں میں کروڑوں لوگوں کے لئے متعارف کیا گیا  اور اس نے صارفین ، فنکاروں ، کہانی سنانے والوں اور اساتذہ کو روزگار فراہم کیا ہے ان میں سے بہت سے لوگ پہلی بار انٹرنیٹ استعمال کرنے والے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انہیں یقین ہے کہ حکومت سے
بات چیت کے ذریعہ اس مسئلے کو حل کرلیا جائے گا

Post source : Urduleaks