August 14, 2020

چین کے اویغورمسلمانوں پر بڑھتے مظالم ناقابل برداشت:سیدشاہنوازحسین

چین کے اویغورمسلمانوں پر بڑھتے مظالم ناقابل برداشت:سیدشاہنوازحسین

 

چین کے اویغورمسلمانوں پر بڑھتے مظالم ناقابل برداشت 

کمیونسٹ حکومت نے ہٹلر اوراسٹالن کو بھی مات دے دی ہے

نئی دہلی -10 جولائی ( اردو لیکس) بھارتیہ جنتاپارٹی کے قومی ترجمان اور سابق مرکزی وزیر سیدشاہنوازحسین نے چین کے سنکیانگ خطہ میں مسلمانوں پر ہورہے مظالم کے خلاف سخت ردعمل کااظہارکیاہے۔انہو ںنے کہاہے کہ بعض آزادخبررساں ایجنسیوں اورحقوق انسانی سے وابستہ افراد نے حقائق پر مبنی جو رپورٹ پیش کی ہے وہ دل کودہلادینے والی ہے، کمیونسٹ حکومت کے بڑھتے مظالم ناقابل برداشت ہیں۔سیدشاہنوازحسین نے کہاہے چین کے سنکیانک خطہ میں اویغور مسلمانوں کی جس طرح نسل کشی کی جارہی ہے وہ اکیسویں صدی کا سب سے بڑا ظلم ہے جس نے ہٹلراوراسٹالن کوبھی مات دے دی ہے ،اس لیے ہندوستان سمیت دنیابھر کو اس کے خلاف آوازبلندکرنی چاہیے۔انہوں نے کہاہے کہ بعض رپورٹوں کے مطابق چین کی حکومت نے ایسے ایسے حراستی کیمپ جنہیں وہ ڈی ریڈیکلائزیشن کیمپ کہتی ہے، بنارکھے ہیں جہاں 30لاکھ اویغورمسلمانوں کو قیدکرکے انہیں طرح طرح کی اذیتیں دی جارہی ہیں۔گمراہ کن بات یہ ہے کہ چین ان حراستی کیمپوں کو تعلیمی کیمپ سے بھی تعبیرکرتاہے ۔
چین کے سنکیانگ خطہ میں اویغورمسلمانوں پر مظالم کی خبریں چھن چھن کرتوآہی رہی تھیں مگر تازہ رپورٹ انڈیاٹوڈے نے پیش کی ہے جس میں50سٹیلائٹ تصاویرکے تجزیے سے حراستی کیمپوں کی توسیع کاجائزہ لیاگیاہے ،یہ سبھی کیمپ ہندوستان کے لداخ سے کافی قریب ہیںجہاں مسلمانوں کو رکھاجاتاہے۔
بی جے پی کے سینئر لیڈر شاہنواز حسین نے چین کے مظالم پر برہمی کااظہارکرتے ہوئے یہ بھی انکشاف کیاہے کہ سنکیانگ کی مسلم آبادی کو کم کرنے کے لئے چین کی کمیونسٹ حکومت مسلم خواتین کوچینی مردوںسے شادی کرنے پر بھی مجبورکررہی ہے،بلکہ اس کے لیے حکومت نے وہاں مہم چلارکھی ہے جس کی وجہ سے ہزاروں مسلم خواتین اپنی عفت وعصمت بچانے میں ناکام رہی ہیں۔اسی کے ساتھ ان کیمپوں میں مسلمانوں کوکھانے پینے کی تکلیف کے ساتھ ساتھ عبادت میں بھی رکاوٹوں کاسامناہے۔
سیدشاہنوازحسین نے کہاہے کہ چین میںمسلمانوں پر ہورہے مظالم اورزیادتی کے باوجودپاکستان چین کے تلوے چاٹ رہاہے،افسوس کہ اوآئی سی بھی خاموش ہے اورخودہندوستان میں مسلم تنظیموں اورعلماءکاکوئی ردعمل سامنے نہ آنے پر بھی دکھ کااظہارکیاہے۔انہوں نے تمام مسلمانوں سے اپیل کی ہے کہ وہ چین کی ظالم کمیونسٹ حکومت کے خلاف ہرپلیٹ فارم پر آوازبلندکریں۔ انہوں نے کہاہے کہ مسلمانوں کے لیے بھارت سے اچھادیش اورنریندرمودی سے اچھاوزیراعظم نہیں ہوسکتا۔اس کے باوجود ہندوستان میں کوئی معمولی ساواقعہ رونماہوتاہے توملک کے کونے کونے میں احتجاج کی آندھی چلنے لگتی ہے لیکن چین میں مسلمانوں کے خلاف اس قدرظلم وزیادتی پر لوگ خاموش ہیں یہ سمجھ سے بالاترہے۔

Post source : Urduleaks