August 14, 2020

خانگی اسکولوں کو آن لائن کلاسس چلانے کی اجازت نہیں دی گئی : ہائی کورٹ میں ایڈووکیٹ جنرل کا بیان

خانگی اسکولوں کو آن لائن کلاسس چلانے کی اجازت نہیں دی گئی : ہائی کورٹ میں ایڈووکیٹ جنرل کا بیان

 

حیدرآباد 13جولائی(اردو لیکس) پرائیویٹ اسکولس میں آن لائن کلاسس پر پابندی عائد کرنے کی خواہش کرتے ہوئے داخل کردہ مفاد عامہ کی عرضی کی آج تلنگانہ ہائی کورٹ میں سماعت ہوئی۔حیدرآباد اسکولس اسٹوڈنٹس پیرنٹس ایسوسی ایشن نے یہ مفاد عامہ کی عرضی داخل کی تھی حکومت کی طرف سے نمایندگی کرنے والے ایڈووکیٹ جنرل نے عدالت کو بتایا کہ حکومت نے خانگی اسکولس کو آن لائن کلاسس چلانے کی اجازت نہیں دی ہے جس پر عدالت نے سوال کیا کہ حکومت کی اجازت کے بغیر کس طرح آن لائن کلاسس چلائے جا رہے ہیں۔اور آن لائن کلاسس چلانے والے اسکولوں کے خلاف حکومت کس طرح کی کارروائی کررہی ہے ایڈووکیٹ جنرل نے کہا کہ 31 جولائی تک تمام تعلیمی اداروں کو تعطیلات دی گئی ہیں جس پر عدالت نے کہاکہ آن لائن کلاسس پر حکومت کا کیا موقف ہے اس کی تفصیلات آیندہ پیر تک پیش کی جائے۔۔

Post source : Urduleaks