October 24, 2020

مسلمانوں کی مسیحا جیسنڈا آرڈرن کی شاندار کامیابی _ دوبارہ نیوزی لینڈ کی وزیراعظم منتخب

مسلمانوں کی مسیحا جیسنڈا آرڈرن کی شاندار کامیابی _ دوبارہ نیوزی لینڈ کی وزیراعظم منتخب
Photo Credit To File

حیدرآباد _18 اکتوبر ( اردو لیکس ڈیسک)نیوزی لینڈ کے وزیر اعظم کی حیثیت سے جیسنڈا  آرڈرن نے دوسری بار شاندار کامیابی حاصل کی ہے۔ ان کی یہ کامیابی ملک بھر میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے اقدامات  کا ثبوت بتایا جا رہا ہے۔ ہفتے کے روز ہونے والے سروے میں 1۔9 ملین افراد نے اپنے حق رائے دہی کا استعمال کیا۔ جیسنڈا نے ہفتے کی گنتی میں 50 فیصد ووٹوں کی اکثریت حاصل کرکے تاریخ رقم کی۔  1996 کے بعد یہ پہلا موقع ہے جب عام انتخابات میں انھوں نے 50 فیصد ووٹ حاصل کیے ہیں۔

جیسنڈا آرڈرن کی قیادت میں سنٹر لیفٹ لیبر پارٹی نے 50 فیصد ووٹوں کے ساتھ 65 نشستوں پر کامیابی حاصل کی۔ نیشنل پارٹی نے صرف 27 فیصد ووٹوں کے ساتھ 35 نشستیں جیت لیں۔ یہ 2002 کے بعد سے نیشنل پارٹی کے لئے بدترین نتیجہ ہے۔ نیوزی لینڈ کے عام انتخابات میں مرکزی مقابلہ دو خواتین کے مابین تھا۔ 61 سالہ جوڈتھ کولنز نے 40 سالہ وزیر اعظم جیسنڈا آرڈرن کو چیلنج کیا ہے۔ لیبر پارٹی سے تعلق رکھنے والی جیسنڈا 2017 میں وزیر اعظم بن گئیں۔ واضح رہے کہ نیوزی لینڈ کے کرائسٹ چرچ میں واقع دو مساجد میں اندھا دھند فائرنگ کے واقعہ میں 50 سے زائد افراد جاں بحق ہوگئے تھے اس وقت وزیر اعظم جیسنڈا آرڈرن نے مسلمانوں کے ساتھ کافی ہمدردی کا مظاہرہ کیا تھا اور متاثرہ خاندانوں سے ملاقات کرتے ہوئے پرسہ بھی دیا تھا اس وقت ساری دنیا کے مسلمانوں کی نظروں میں جیسنڈا آرڈرن ایک مسیحا بن گئی تھی

 

Post source : Urduleaks desk