January 23, 2021

جی ایچ ایم سی انتخابات میں بیٹے نے ماں کو ہرا دیا

جی ایچ ایم سی انتخابات میں بیٹے نے ماں کو ہرا دیا

محمد امتیاز کی رپورٹ

حیدرآباد _5 دسمبر ( اردو لیکس) گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے انتخابات میں حصہ لینے والے امیدوار کے ساتھ ایک عجیب و غریب واقعہ پیش آیا۔ امیدوار کو یہ اندازہ نہیں تھا کہ اس کے بیٹے کی ڈمی نامزدگی اس کی شکست کا سبب بنے گی۔ یہ واقعہ بی این ریڈی نگر ڈویژن میں پیش آیا۔ موداگونی لکشمی پرسنہ گوڈ نے اس ڈویژن سے ٹی آر ایس کی جانب سے مقابلہ کیا۔ اور ان کے بیٹے رنجیت گوڑا نے اپنی ڈمی نامزدگی داخل کی ۔ اور نامزدگی واپس لینے کی آخری تاریخ ختم ہونے کی وجہہ سے رنجیت گوڑا نے اپنی نامزدگی واپس نہیں لی اس کا نام بھی بیلٹ پیپر پر شائع ہوا۔ انتخابات میں ٹی آر ایس کے امیدوار رنجیت گوڑا کو 39 ووٹ حاصل ہوئے ۔ ان ووٹوں کی وجہ سے اس کی ماں ٹی آر ایس کے اصل امیدوار لکشمی پرسینا کو شکست ہوئی۔ وہ بی جے پی امیدوار سے 32 ووٹوں کے معمولی فرق سے ہار گئیں۔ اس ڈمی نامزدگی کی وجہہ سے بی جے پی کے امیدوار موڈو لیچریڈی غیر معمولی طور پر کامیاب ہوگئے۔

Post source : urduleaks