تبلیغی جماعت کے مرکز پر پابندیاں ختم کرنے دہلی ہائی کورٹ میں درخواست

نئی دہلی _ 25 ،فروری ( اردولیکس) دہلی ہائی کورٹ نے دہلی کے نظام الدین مرکز کے احاطہ میں عائد پابندیوں کو ختم کرنے سے متعلق داخل ہونے والی درخواست پر مرکزی حکومت اور  دہلی حکومت و پولیس کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 5 مارچ تک جواب دینے کی ہدایت دی ہے گذشتہ سال مارچ سے مرکز کی عمارت کو اس وقت پولیس نے مقفل کردیا تھا جب تبلیغی جماعت کے اجتماع کے بعد کورونا وائرس کی وبا پھیل گئی تھی جس پر مقدمہ درج کیا گیا تھا دہلی وقف بورڈ کی جانب سے دائر ہونے والی اس درخواست میں کہا گیا ہے کہ مسجد بنگلہ والی ، مدرسہ کاشف العلوم اور بستی حضرت نظام الدین میں واقع  ہاسٹل مارچ 2020 کے بعد سے بند ہے ، اور مزید کہا گیا ہے کہ عام لوگوں کو مسجد میں داخل ہونے اور نماز پڑھنے کی اجازت نہیں ہے۔ مدرسہ میں طلبا کو اپنی تعلیم جاری رکھنے کی اجازت نہیں ہے  درخواست میں کہا گیا ہے کہ صرف ایک حصہ – مسجد – مذہبی اجتماع کے لئے استعمال کیا گیا تھا لیکن پولیس نے مکمل احاطہ کو بند کردیا۔مرکزی حکومت نے تمام مذاہب کی عبادت گاہوں میں عبادت کی اجازت دے دی لیکن اب تک تبلیغی جماعت کے مرکز نظام الدین پر پابندی عائد ہے