عوامی مقامات پر سگریٹ نوشی اور گٹکھہ کھانے پر ایک ہزار روپے جرمانہ

رانچی _26 ،فروری ( اردولیکس) جھارکھنڈ کی حکومت نے اپنے ایک اہم فیصلہ میں عوامی مقامات پر سگریٹ جلانے یا گٹکھہ کھانے پر ایک ہزار روپے جرمانہ عائد کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ چیف منسٹر ہیمنت سورین کی صدارت میں منعقدہ کابینہ کے اجلاس میں جرمانہ عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ تمباکو کی مصنوعات پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ ہکا بار مکمل طور پر بند ہوجائیں گے ۔ اگر کوئی قواعد کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ہکا بار چلاتے ہیں تو انہیں تین سال قید کی سزا سنائی جائے گی۔ کابینہ نے 21 سال سے کم عمر افراد کو سگریٹ اور گٹکھہ کی فروخت کے خلاف کارروائی کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ کابینہ نے یہ بھی ہدایت کی ہے کہ تعلیمی اداروں ، اسپتالوں ، طبی اداروں ، سرکاری دفاتر ، عدالتوں اور عبادت گاہوں کے 100 میٹر کے فاصلے پر کوئی سگریٹ یا گٹکھہ فروخت نہیں کیا جائے گا۔