انٹر نیشنل

رمضان المبارک میں متحدہ عرب امارات میں اجمتماعی افطارپرپابندی،تراویح کی اجازت،نماز کے فوری بعد مساجد کو بند کردیا جائے گا

نئی دہلی 17 مارچ ( اردولیکس) متحدہ عرب امارات نے ماہ صیام کے دوران میں کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے اور اس سے شہریوں کو محفوظ رکھنے کے لیے نئے اقدامات کے نفاذ کا اعلان کیا ہے۔ وزارت صحت نے رمضان کے لیے نیا ہدایت نامہ جاری کیا ہے۔ یو اے ای کی قومی ایمرجنسی کرائسیس اور ڈیزاسسٹر مینجمنٹ اتھارٹی نے ایک بیان میں کہا ہے کہ رمضان میں رات کے اجتماعات سے گریز کیا جائے، خاندان کے دوسرےافراد کے گھروں میں جانے سے گریز کیا جائے، گھروں اور خاندانوں کے درمیان کھانے کے تبادلے یا تقسیم سے بھی گریز کیا جائے۔ مساجد کے باہر اجتماعی افطار اور کھانے تقسیم کرنے یا عوامی مقامات پر افطار کے انتظام پر سختی سے پابندی عاید کردی گئی ہے۔اتھارٹی نے واضح کیا کہ صرف مزدوروں کی اقامت گاہوں میں رمضان میں کھانے تقسیم کیے جاسکتے ہیں۔ کہا گیا ہے کہ رمضان میں سخت پابندیوں کے باوجود مساجد میں نماز تراویح کی اجازت ہوگی۔البتہ نمازِعشاء اور تراویح کو زیادہ سے زیادہ تیس منٹ میں ختم کرنا ہوگا۔ مساجد کو نماز کے فوری بعد بند کردیاجائے گا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button