محبوب نگر میں نظام دور کے مسافر خانہ میں عارضی مندر _برخواست کرنے محمد عبد الہادی ایڈوکیٹ صدر مجلس اتحادالمسلمین ضلع محبوب نگر کا مطالبہ

محبوب نگر: 25 جولائی (اردو لیکس) محمد عبد الہادی ایڈوکیٹ صدر مجلس اتحادالمسلمین ضلع محبوب نگر نے محلہ نیوٹاؤن میں  ٹی. آر. ایس پارٹی کے ضلعی دفتر سے متصل واقع نظام  دور حکومت میں مسافروں کے قیام کے لئے تعمیر کردہ قدیم مسافر خانہ جو بوسیدہ ہوچکا ہے کی مرمت اور محکمہ آثار قدیمہ کی بے توجہی کے باعث کھنڈر بن چکا ہے کو  بعض اشرار نے نظام کی دور کی سرکاری ملکیت کو مندر میں تبدیل کرنے کے منصوبے کے تحت عارضی مندر کے ایک تیار شدہ علامت کو لا کھڑا کیا ہے تاکہ لب سڑک واقغ قیمتی اراضی پر قبضہ جمایا جاسکے. مسلمان عرصہ دراز سے حج ہاوز کی تعمیر کے لیے سرکاری اراضی کے الاٹمنٹ کی نمائندگی کرتے ہوئے آرہے ہیں لیکن کوئی کارروائی نہیں ہو رہی ہے ایسے میں ارباب حکومت اگر نطام کے دور کے اس مسافر خانہ کو جو مسلمان حکمران کی سرکاری آراضی ہے کو مندر میں تبدیل کرنے کی شرپسندی پر مبنی شرارت کو روک کر اس اراضی کو حج ہاوز کی تعمیر کے لیے الاٹ کرے تو ضلع بھر سے ضلع مسقر کو آنے والے عازمین حج کی رہائش کے زریعے مسافر خانہ کے مقصد کی بھی تکمیل ہوگی اور آثار قدیمہ سے متعلق قدیم مسافر خانہ کی ازسرنو تعمیر ہوکر اس کے اصل مقصد کی تکمیل ہوگی جناب عبدالہادی صاحب نے ارباب حکومت اور ضلع انتظامیہ کے علاوہ آثار قدیمہ کے عہدیداروں سے اس قدیم مسافر خانہ کے تحفظ اور اغیار کے قبضہ کی ظاہری علامت کا نوٹ لیکر اسکے صحیح استعمال کا مطالبہ کیا اس موقع پر سید سعادت اللہ حسینی مجلسی فلور لیڈر وصدر ٹاون مجلس ،طیب باشعوار المشجری آرگنائزنگ سکریٹری ،الیاس مجاہد، سجو پہلوان اور دیگر اصحاب موجود تھے