مثالی مسلمان کیسا ہوتا ہے؟

 

ڈاکٹر محمد رضی الاسلام ندوی

1983میں دار العلوم ندوۃ العلماء لکھنؤ سے فضیلت کرنے کے بعد میں نے علی گڑھ مسلم یونی ورسٹی میں داخلہ لیا _ اسی وقت سے میں نے عالم عرب کے مشہور ادباء و مصنفین کی کتابوں کا عربی سے اردو میں ترجمہ کرنے کا آغاز کیا اور بہت سی کتابوں کا ترجمہ کر ڈالا _ یہ کام برادر امان اللہ خاں کرواتے تھے ، جو ان دنوں ہندوستان پبلی کیشنز اور کریسنٹ پبلشنگ کمپنی نئی دہلی کے ذمے دار تھے _ میرا پہلا ترجمہ ڈاکٹر محمد علی ہاشمی کی عربی تصنيف ‘ شخصية المسلم كما يصوغها الإسلام في الكتاب والسنة کا تھا ، جسے میں نے 1984 کے اواخر میں مکمل کرلیا تھا _ یہ کتاب 1985 میں’ اسلامی زندگی کتاب و سنت کی روشنی میں’ کے نام سے ہندوستان پبلی کیشنز نئی دہلی سے شائع ہوئی _ اللہ تعالیٰ نے اس ترجمے کو بہت زیادہ مقبولیت عطا فرمائی اور بعض ناشرین نے اسے جوں کا توں اور بعض نے نام بدل بدل کر شائع کیا _ مثلاً :
* نیو کریسنٹ پبلشنگ کمپنی نئی دہلی سے یہ برابر شائع ہورہی ہے _
* البدر پبلی کیشنز لاہور نے 2005 میں اسے ‘اسلامی زندگی قرآن و حدیث کی روشنی میں’ کے نام سے چھاپا _ اس کے کئی اڈیشن نکلے _
* کتاب کے 9 ابواب کو البدر پبلی کیشنز لاہور نے الگ الگ کتابچوں کی شکل میں بھی چھاپا اور اس کے بھی متعدد اڈیشن نکلے _
* دار الأندلس لاہور نے اسے ‘مثالی مسلمان’ کے نام سے 1426ھ (2006) میں شائع کیا _ انھوں نے ایک کام تو اچھا کیا کہ کتاب میں وارد تمام احادیث کی مکمل تخریج کروادی ، لیکن ساتھ ہی تسہیل و تہذیب کا نامطلوب کام بھی کرڈالا _
* اسی نام (مثالی مسلمان) سے یہ کتاب دار العلم ممبئی سے 2012 میں شائع ہوئی _
* اس کتاب کو دار الإبلاغ لاہور والوں نے 2003 میں ‘اسلامی طرزِ زندگی’ کے نام سے شائع کیا_ انھوں نے غضب یہ کیا کہ کتاب پر نظر ثانی ، نظر ثالث اور ترمیم و اضافہ کا کام بھی کروایا اور یہ کام انجام دینے والوں کے نام تو بیرونی ٹائٹل اور اندرونی ٹائٹل پر بہت نمایاں کرکے شائع کیے ، لیکن بیچارے مترجم کا نام اندر ایک جگہ اتنے باریک خط میں لکھوایا کہ چشمہ لگائے بغیر کسی کو نظر نہ آسکے _
* انٹرنیشنل اسلامی پبلشنگ ہاؤس ، ریاض(سعودی عرب) ، جو اصل عربی کتاب کا ناشر ہے ، اس نے اپنے ادارے سے اردو ترجمہ بھی شائع کرنے کی خواہش کی ، چنانچہ ترجمہ ان کے پاس بھیج دیا گیا _
اس کتاب کے ابواب درج ذیل ہیں :
(1) مسلمان کا تعلق اپنے رب کے ساتھ
(2) مسلمان کا تعلق اپنے نفس کے ساتھ
(3) مسلمان کا تعلق اپنی بیوی کے ساتھ
(4) مسلمان کا تعلق اپنے والدین کے ساتھ
(5) مسلمان کا تعلق اپنی اولاد کے ساتھ
(6) مسلمان کا تعلق اپنے عزیزوں اور رشتے داروں کے ساتھ
(7) مسلمان کا تعلق اپنے پڑوسیوں کے ساتھ
(8) مسلمان کا تعلق اپنے بھائیوں اور دوستوں کے ساتھ
(9) مسلمان کا تعلق اپنے معاشرہ کے ساتھ
ان ابواب سے کتاب کی اہمیت کا بہ خوبی اندازہ لگایا جا سکتا ہے _
اسلام ایک کامل دین اور مکمل دستورِ حیات ہے ، جوزندگی کے تمام شعبوں میں انسانیت کی رہ نمائی کرتا ہے _ اسلام جہاں انفرادی زندگی میں فرد کی اصلاح پر زور دیتا ہے وہیں اجتماعی زندگی کے زرّیں اصول بھی وضع کرتاہے _ اسلامی نظامِ حیات میں جہاں عبادت کی اہمیت ہے وہیں معاملات و معاشرت اور اخلاقیات کو بھی اولین درجہ حاصل ہے ۔ ہمارے معاشرہ میں بگاڑ کا ایک بڑا سبب یہ ہے کہ ہم ہمیشہ حقوق وصول کرنے کے خواہاں رہتےہیں ، لیکن دوسروں کےحقوق ادا کرنے سے کنارہ کرتے ہیں _ جو انسان حقوق لینے اور دینے میں توازن رکھتا ہو وہ یقیناً ا س بگڑے ہوئے معاشرے میں بھی انتہائی معزز ہوگا اور سکون کی زندگی بسر کرے گا ۔ اصلاحِ معاشرہ کے لیے تمام اسلامی تعلیمات میں اسی چیز کو مدّنظر رکھا گیا ہے _
اس کتاب ميں کتاب و سنت کے نصوص کی روشنی میں ایک مسلمان کی سچی تصویر کشی کی گئی ہے اور جسم ، عقل اور روح کی تربیت ، عقائد کی اصلاح ، عبادات کی ادائیگی اور اخلاق و کردار سے آراستگی سے متعلق اسلامی تعلیمات کو یکجا کردیا گیا ہے ۔ اسلامی تہذیب و معاشرت کےخدّ و خال نمایاں کرنے کے ساتھ مغربی تہذیب کے کم زور پہلوؤں ، نقائص اور عیوب کو واضح کیا گیا ہے اور اسلامی تہذیب کے ساتھ ان کا موازنہ کرکے اسلامی تہذیب کی برتری ثابت کی گئی ہے ۔
اس کتاب کو پاکستانی ویب سائٹ kitabosunnat.com پر اپ لوڈ کردیا گیا ہے _ درج ذیل لنک سے اسے ڈاؤن لوڈ کیا جاسکتا ہے :

https://kitabosunnat.com/kutub-library/Islami-Zindagi-Quran-Hadith-Ki-Roshni-Me

جو حضرات کتاب کا پی ڈی ایف چاہتے ہیں وہ واٹس ایپ نمبر 9582050234_91+ پر رابطہ کریں _