جرائم و حادثات

عادل آباد میں قحبہ گیری کے اڈے پر پولیس کا دھاوا _ دو دلال گرفتار

عادل آباد ٹاسک فورس پولیس نے خفیہ طور پر چلائے جا رہے جسم فروشی کے اڈے پر مصدقہ اطلاع ملنے پر چھاپہ مارتے ہوئے پردہ فاش کردیا۔عادل آباد پولیس ہیڈکوارٹر سے جاری کردہ پریس نوٹ کے مطابق ٹاسک فورس سی آئی چندرا مولی کی قیادت میں ایس آئی ہریبابو نے خاتون پولیس اہلکاروں کے ہمراہ تین ستمبر کی رات کو منصوبہ بند طریقہ سے عادل آباد کے دسناپور میں واقع راجدھانی ہوٹل کے قریب کرائے کے مکان میں چلارہے جسم فروشی کے اڈے پر دھاوا کرتے ہوئے رنگ ہاتھوں پکڑلیا۔

 

پولیس نے بتایا کہ مہاراشٹرا سے غریب نوجوان خواتین کو جسم فروشی کی طرف راغب کررہے تھے۔جسم فروشی کے کاروبار میں ملوث 33 سالہ ایم راہول اور چلکوری نگر سے تعلق رکھنے والے 34 سالہ فضل شاہ کو جسم فروشی کے الزام میں گرفتار کرلیا۔اور ایک چلکوری نگر سے تعلق رکھنے والا عبدالغفار نامی شخص مفرور بتایا گیا ہے۔موالا پولیس نے 13 ہزار نقد رقم اور 4 سیل فون ضبط کرتے ہوئے موالا پولیس اسٹیشن میں ایک کیس درج کرتے ہوئے مزید تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔اور متاثرہ خواتین کی کونسلنگ کرتے ہوئے سکھی سنٹر منتقل کردیا۔

 

ٹاسک فورس سی آئی ای چندرا مولی نے کہاکہ ضلع ایس پی کی ہدایت پر عادل آباد پولیس غیر قانونی سرگرمیوں میں پائے جانے والے افراد پر خصوصی نظر رکھے ہوئے ہے۔اس چھاپے میں ٹاسک فورس عملہ شوبھن،ایم اے کریم،شید راحت،منگل سنگھ،ٹھاکر جگن سنگھ،ہنمنت راؤ،خاتون کانسٹیبل کے ممتا،وی سونی اور دیگر موجود تھے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button