خطرناک مقامات پر سیلفی لینا جرم

سیلفی لینے کے دوران ہورہی اموات کو دیکھتے ہوئے مرکزی حکومت نے ریاستوں کے لئے رہنمایانہ خطوط جاری کئے ہیں۔ اب سے کوئی بھی شخص خطرناک مقامت پر سیلفی نہیں لے سکے گا۔
اتنا ہی نہیں اب سیاحتی مقامت پر سیلفی ڈینجر زون بنائے جائیں گے اور ایسے علاقوں کی نشاندہی کی جائےگی جہاں سیلفی لینا خطرناک ہوسکتا ہے۔ مرکزی وزیرمہیش شرما نے لوک سبھا میں بتایا کہ مہاراشٹر اور کرناٹک کی حکومتوں نے اس سمت میں اچھی پہل کی ہے. انہوں نے مرکزی حکومت کی طرف سے لاگو کئے گئے ایڈوائزری میں یہ بھی کہا ہے کہ ریاست اپنی اپنی ٹورسٹ ویب سایٹس پر اس کی تفصیلات واضح کریں۔آپ کو بتا دیں کہ سال 2015 میں سےلپھي کے چکر میں 15 سیاحوں کی موت ہوئی تھی. وہیں سال 2016 میں جولائی تک یہ اعداد و شمار 37 تک پہنچ چکا ہے. ممبئی کے جوہو چوپاٹی اور میرین ڈرائیو سمیت 16 مقامات پرسیلفی لینے پر پابندی لگی ہے.ٹرین اور ریلوے پل پر سےلپھي لینا جرم ہے. محفوظ عمارتوں پربھی سیلفی لینا جرم ہے.