جنرل نیوز

مجلس اتحادالمسلمین اوٹکور کی جانب سے جامع مسجد پنچ کے امام و خطیب کے اعزاز میں مجلسی قاٸدین نے کیا نشست کا اہتمام

*مجلس اتحادالمسلمین اوٹکور کی جانب سے جامع مسجد پنچ کے امام و خطیب کے اعزاز میں مجلسی قاٸدین نے کیا نشست کا اہتمام*

 

اوٹکور :(اردو لیکس۔عبدالوسیم) مجلس اتحادالمسلمین اوٹکور کی جانب سے جامع مسجد پنچ کے امام و خطیب مولانا نورالاسلام رحمانی صاحب کو اپنے وطن روانہ ہونے پر شال پوشی و تہنیت پوشی کی گٸی نشست میں مجلس قاٸدین نے نیک تمناٶں کا اظہار کرتے ہوۓ امام صاحب کی خدمات کی ستاٸش کی۔مجلس کے منڈل صدر عبدالمنیر پردے نے بھی مولانا کی وطن واپسی پر نیک تمناٶں کے ساتھ ہی کہا کہ مولانا کا اس طرح ہمارے درمیان سے وطن واپسی کا ہمیں ہمیشہ قلق رہیگا۔اس موقع پر مولانا نے مجلس کے قاٸدین کی جانب سے اس اعزازیہ نشست و شال پوشی وغیرہ کرنے پر تشکر کا اظہار کیا۔

انہوں نے ملک کے موجودہ حالات پر تبصرہ کرتے ہوۓ مجلس کے کارکنان کو اہم نصیحت کے ساتھ ہی اتحاد ملت کی جانب توجہ دلاکر رہنمائی فرمائی۔واضح رہے کہ مولانا نے اپنی گھریلو مصروفيات کے تحت ایک ماہ قبل ہی اپنے عہدہ سے استعفی دے دیا تھا۔مولانا کے استعفی کی اطلاع پر مقامی اردو صحافيوں نے ان سے ملاقات کرکے افسوس کا اظہار کرتے ہوۓ نیک تمناٶں کےساتھ شال پوشی کی تھی۔اسی ہفتہ جمعہ کے روز مولانا نے اتحاد ملت پر خطبہ دیتے ہوۓ عالمی و ملکی حالات کے ساتھ مقامی مسلمانانوں کو متحد ہونے اور اپنے سیاسی شعور بیدار کرنے پر زور دیتے ہوٸے کہا کہ اس بستی میں مسلم مرد و خواتین کی تعداد تقریبا آٹھ ہزار ہے ضرورت اس بات کی ہے کہ بستی کے تمام مسلمان اور خصوصی طور پر مسلم قاٸدین کو آگے بڑھ کر اس مقامی سطح پر اس طرح اتحاد قاٸم کرنا ہوگا کہ اوٹکور پورے ملک کے لیۓ ایک نمونہ ثابت ہوسکے۔

انہوں نے اوٹکور مستقر کی تاریخی جامع مسجد پنچ میں اپنی خدمات کا حوالہ دیتے ہوۓ کہا کہ مسجد میں امامت و خطابت کے فراٸض انجام دینے کے دوران اگر مجھ سے کسی کو کوٸی حق تلفی یا دل آزاری وغیرہ ہوٸی ہوتو اس کے لیۓ میں معذرت خواہ ہوں اور ساتھ ہی کہا کہ یہاں کی عوام کے ذریعہ گذشتہ ڈھاٸی سالوں سے بے حد عزت، محبت، پیار ملا ہے جو بھلاۓ جانے کے قابل نہیں ہے۔اور میں یہاں سے اوٹکور کی عوام کی محبتوں کو اپنے دل میں لٸے ہوٸے جارہا ہوں۔نماز کے بعد مسجد کمیٹی کے ذریعہ مولانا کی شال پوشی کی گٸ تھی ساتھ جماعت اسلامی ہند کے مقامی امیر منصور احمد صاحب نے مسجد کمیٹی کے کارکنان و مصلیان کی جانب سے بھول چوک یا کسی قسم کی حق تلفی وغیرہ کے سلسلہ میں بھی مولانا سے معذرت طلب کی۔مولانا نے مجلس اتحاد المسلمین کے ذریعہ اعزازی نشست میں بھی نوجوانوں کو مشورہ دیا کہ آپس میں اتحاد و اتفاق سے رہتے ہوٸے مستقر کی عوام کی خدمت کرتے رہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ دینی و دنیوی کاموں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینے آپس میں ایک دوسرے کی مدد و تعاون بھی کرتے رہیں۔اس موقع پر مجلس قاٸدین میں محمد اسماعیل وارڈ ممبر،محمد آصف،محمد مجاہد،محمد فیاض،محمد عرفان،محمد عمران،محمد رحمت اللہ،محمد بابو میاں،فتح شاہ،محمد جاوید و دیگر شریک تھے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button