ایچ سی یو معاملہ پر بائیں بازو کا احتجاج

 

بائیں بازو جماعتوں نے ایچ سی یو کے وی سی اپاراو کو برطرف کرنے کا مطالبہ کرتے ہوے.چلو  راج بھون پروگرام منظم کیا.اس دوران پولیس نے سی پی آیی کے ناراینا اور دوسروں کو خیرت آباد چوراہے پر گرفتار کرلیا.اس موقع پر ناراینا نے میڈیا سے کہا کہ نریندر مودی حکومت ملک کی یونیورسٹیز سے بائیں بازو جماعتوں کے طلبا تنظیموں کو ختم کرنے اور اے بی وی پی کو آگے بڑھانے کی کوشیش کررہی ہے اس لئے کئی یونیورسٹی میں اے بی وی پی سرگرم ہوگئی ہے اور دیگر تنظیموں کے لیڈرس کو ہراساں اور ان پر مقدمات درج کئے جارہے ہیں مرکزی حکومت اپاراو کا استعمال کررہی ہے روہت کی موت کے بعد سنٹرل یونیورسٹی کو پولیس کیمپ میں تبدیل کردیا گیا.ناراینا نے کہا کہ جموں کشمیر میں پی ڈی پی سے اتحاد کرنے والی پارٹی بی جے پی کو دیش بکھتی پر بات کرنے کا حق نہیں ہے قبل ازیں 10 بائیں بازو جماعتوں کے لیڈرس اور کارکنوں نے اپاراو کو ہٹانے اور سمتراایرانی, بنڈارو دتاتریہ کو کابینہ ست برطرف کرنے کے نعرے لگاے