ہیلت

اے آئی جی ہاسپٹل میں منعقدہ بڑی  آنت کا   کینسر سے متعلق شعور بیداری تقریب سے کلواکنٹلہ کویتا کا خطاب

معیاری غذا اور ورزش کے ذریعہ صحت مند زندگی ممکن

*اے آئی جی ہاسپٹل میں منعقدہ بڑی  آنت کا   کینسر سے متعلق شعور بیداری تقریب سے کلواکنٹلہ کویتا کا خطاب*

بڑی آنت کا کینسر( کولوریکٹل) ایک خطرناک مرض بن چکا ہے۔غیر صحت بخش غذا کے استعمال سے بہت سے افراد خاص طور پر نوجوان طبقہ اس مرض کا شکار ہورہا ہے۔ ان خیالات کا اظہار رکن قانون ساز کونسل کلواکنٹلہ کویتا نے اے آئی جے ہاسپٹل میں کولوریکٹل کینسر سے متعلق شعور بیداری تقریب میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کے دوران خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے مزید کہا کہ بہت سے افراد کینسر کی وجہ سے موت کی آغوش میں جارہے ہیں، چھوٹے بچے بھی بڑی تعداد میں کینسر جیسی بیمارویوں کا شکار ہورہے ہیں۔کولوریکٹل کینسر نہ صرف ہندوستان بلکہ دنیا بھر میں تیزی سے پھیل رہا ہے۔ رکن کونسل نے کہا کہ باقاعدگی سے طبی معائنہ صحت مند زندگی کی کلید ہے۔خاص طور پر خواتین کو چاہئے کہ وہ اپنا طبی معائنہ کرواتے رہیں۔قوت بخش غذا اور ورزش کا اہتمام کریں تاکہ اس مہلک وباء وباء سے محفوظ رہا جاسکے۔کولوریکٹل کینسر(بڑی آنت کا کینسر) ایک عام لیکن قابل علاج کینسر ہے۔انہوں نے کہا کہ ہر کسی کو کینسرجیسے امراض سے واقفیت نہایت ہی ضروری ہے۔ کویتا نے بتایا کہ حیدرآباد ایک میڈیکل ہب بن چکا ہے۔ ریاستی حکومت طبی سہولیات کو بہتر بنانے میں کئی اہم اقدامات کررہی ہے۔ بعد ازاں اس بیداری پروگرام میں ماہرین طب نے کولوریکٹل کینسر کے ان وجوہات پر روشنی ڈالی جن سے اس مہلک بیماری کا خاطرہ ہے۔ علاوہ ازیں احتیاطی تدا بیر اور علاج سے متعلق بھی حاضرین کو روشناس کرایا گیا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button