جنرل نیوز

بھینسہ میں مسلم فنکشن ہال کی تعمیر کے لئے 45 لاکھ روپئے کی رقم منظور کرنے کے باوجود سنگ بنیاد برفدان کی نظر : کانگریس قاٸد ایم اے لطیف کا الزام

*حکومت تلنگانہ کی جانب سے تین سال قبل بھینسہ میں مسلم فنکشن ہال کی تعمیر کے لیٸے 45 لاکھ روپیٸے کی رقم منظور ہونے کے باوجود سنگ بنیاد برفدان کی نظر : کانگریس قاٸد ایم اے لطیف کا الزام*

 

بھینسہ 27/جون (پریس ریلیز) کانگریس ضلعی اقلیتی جنرل سکریٹری و ریاستی سطحی ترجمان پولنگ بوتھ کمیٹی ایم اے لطيف نے بھینسہ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے مقامی رکن اسمبلی جی وٹھل ریڈی اور بھینسہ شہر کے مسلم ٹی آر ایس قاٸدین کو شدید تنقيد کا نشانہ بناتے ہوئے بھینسہ میں مسلم فنکشن ہال کے لیٸے تین سال قبل ریاستی حکومت کی جانب سے 45 لاکھ روپیٸے منظور ہونے کے باوجود سنگ بنیاد کو برفدان کی نظر کرتے ہوئے بھینسہ کے مسلمانوں کے ووٹ حاصل کرنے کے باوجود دھوکہ دینے کا الزام عاٸد کیا ۔

تمام تفصيلات پیش کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ریاستی حکومت کی جانب سے مدھول تعلقہ کے مختلف مواضعات میں اردو گھر اور مسلم شادی خانہ کی تعمیر کیلئے تین سال قبل یعنی 2019 میں دو کروڑ روپئے کی مظوری عمل میں آئی جسکا جی او نمبر (157) 11.06.2018:dated ہے تین سال مکمل گزرنے کی دہلیز پر ہے لیکن مقامی رکن اسمبلی مدھول جی وٹھل ریڈی اور مقامی ٹی آر ایس مسلم قائدین کی لاپرواہی سے اس معاملے کو ٹھنڈے بستہ میں ڈالدیا گیا بارہا مرتبہ اراضی کی غیر موجودگی کا بہانا بناتے ہوئے اس معاملہ کو مسلمانوں کے ذہنوں سے نکالدیا جارہا ہے اور خدشہ ہیکہ بھینسہ شہر کیلیٸے منظورہ 45 لاکھ روپیٸے رقم واپس نہ ہوجاٸے انھوں نے سوال کیا کہ ڈبل بیڈ رومس ، رعیتوبازار کے علاوہ دیگر طبقات کے کمیونٹی ہالوں کی تعمیرات میں اراضی کی دستیابی اور وقت موجود ہے لیکن صرف اردو گھر مسلم فنکشن ہال کے مسائل کے لئے کوئی کاروائی نہیں کی جارہی ہے

جو تعجب خیز ہے اور مسلم ٹی آر ایس قاٸدین کی قیادت پر سوالیہ نشان ہے انھوں نے کہا کہ بھینسہ کے مسلم ٹی آر ایس قاٸدین صرف اور صرف سوشل میڈیا پر حاضر رہنے کے لیٸے تصویر کشی میں مصروف ہے اور مسلمانوں کے مسائل کی یکسوٸی پر کوٸی توجہ نہیں دے رہے ہیں جبکہ گذشتہ اسمبلی انتخابات میں بھینسہ شہر اور تعلقہ کے مسلمانوں نے ٹی آر ایس امیدوار جی وٹھل ریڈی کو بھاری اکثریت سے کامیابی دلاٸی تھی لیکن اس کے باوجود بھینسہ کے مسلمانوں کی ترقی کے لیٸے حکومت تلنگانہ کی جانب سے منظورہ بجٹ سے کا بھی استعمال نہیں کیا جارہا جو شدید افسوس کا مقام ہے

ایم اے لطيف نے  کہا کہ بھینسہ شہر میں ایک ماہ میں مسلم فنکشن ہال کا سنگ بنیاد نہ رکھنے پر بڑے پیمانے پر جمہوری انداز میں پُرامن طریقے سے کانگریس پارٹی کی جانب سے احتجاج منظم کرنے کا ٹی آر ایس مقامی مسلم قاٸدین اور مقامی رکن اسمبلی کو   انتباہ دیا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button