تلنگانہ میں زراعت کے شعبہ کو نظرانداز کردینے کا اتم کمارریڈی نے لگایا الزام

حیدرآباد-8 ستمبر( اردو لیکس) تلنگانہ کانگریس کے صدر اتم کمار ریڈی نے ٹی آر ایس حکومت پر الزام عاید کیا کہ وہ مرکز سے حاصل ہونے والی خشک سالی کے 920 کروڑ امداد کی رقم دوسرے کاموں پر خرچ کردی ہے انھوں نے کہا کہ خشک سالی سے متاثرہ کسانوں کو مرکز یا ریاست کی طرف سے ایک روپیہ کی امداد نہیں ملی.دیورکنڈہ میں کسانوں کے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوے اتم کمارریڈی نے چیف منسٹر پر زراعت کے شعبہ کو نظرانداز کردینے کا الزام عاید کیا.انھوں نے کہا چار سیزن کے دوران پانی نہ ہونے کی وجہ سے کاشت نہیں ہوپائی.کسانوں کے ایک لاکھ روپیے تک زرعی قرض معاف کرنے کاوعدہ کرتے ہوے اسے پورا نہیں کیا گیا.آیندہ انتخابات تک کسان پھر قرض میں ڈوب جائیں گے.35 لاکھ کسانوں کے قرض کو ادا کرنے کی ضرورت ہے 3.5 لاکھ خواتین اپنے زیوارات فروخت کرکے کاشت کیا تھا کانگریس قاید نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ جی او 421 پر عمل آواری کرتے ہوے خودکشی کرنے والے ہر ایک کسان کو 6 لاکھ روپیے کا ایکس گریشا ادا کرے.