صحافت سے وابستہ ہونے پر خوشی لیکن پیشہ کے دبائو سے بی پی اور شوگر بھی : رکن پارلیمنٹ کویتا

نظام آباد ۔14 مئی ( اردو لیکس)  رکن پارلیمنٹ نظام آباد کویتا نے کہا کہ صحافت اور سیاست دو ایسے پیشے میں جن سے وابستہ ہوجانے کے بعد ابتداء میں خوشی تو ہوتی ہے لیکن رفتہ رفتہ کام کے دباو کے باعث اس سے وابستہ افراد بی پی اور شوگر کے مریض ہوجاتے ہیں کویتا آج نظام آباد میں اردو صحافیوں کے اورینٹیشن پروگرام کا افتتاح کرنے کے بعد منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اردو صحافیوں کے لئے اس طرح کے پروگرام ہر سال منعقد کئے جانے چاہئے ۔انہوں نے اردو صحافیوں کے مسائل کی یکسوئی کا تیقن دیا ۔تقریب سے محکمہ اقلیتی بہبود کے سیکرٹری سید عمر جلیل، نیڈ کیاپ چیرمین سید عبدالعلیم، میر کارپوریشن آکولہ للیتا ،طارق انصاری، قدوس، حافظ کریم الدین کمال اور دوسروں نے خطاب کیا ۔سینر جرنلسٹ ایم اے ماجد،تنظیم کے دیگر ذمدداران غوث، رفیع، شبیر الدین اور دوسروں نے مہمانوں کا استقبال کیا ۔