مولانہ آزاد اردو یونیورسٹی میں پہلی اردو سماجی علوم کانگریس کا انعقاد، قلمکاروں سے تحریر روانہ کرنے کی خواہش

حیدرآباد 20 ستمبر (پریس نوٹ) مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی کے اردو مرکز برائے فروغ علوم اور اسکول برائے فنون و سماجی علوم کے اشتراک سے پہلی قومی اردو سماجی علوم کانگریس 2017 کا 14 اور 15 / دسمبر کو اہتمام کیا جارہا ہے۔ کانگریس کا موضوع اردو سماجی علوم کی تدریس و تحقیق ہے۔ پروفیسر ایس ایم رحمت اللہ، کنوینر کانگریس و ڈین اسکول برائے فنون و سماجی علوم نے بتایا کہ اس کانگریس کا مقصد اردو جاننے والے سماجی علوم کے اسکالرز، اساتذہ اور ریسرچ اسکالرز کو ایک پلیٹ فارم پر لانا ہے تاکہ وہ اردو میں سماجی علوم کی درس و تدریس اور تحقیق سے متعلق درپیش مسائل اور چیلنجز سے روبہ رو ہوسکیں اور سماجی معاملات کی تفہیم کے لیے اردو کو ایک مؤثر ذریعہ تعلیم و تعلم بنانے کے ذرائع اور مواقع دریافت کیے جاسکیں۔ ڈاکٹر عابد معز، معاون کنوینر و کنسلٹنٹ اردو مرکز برائے فروغ علوم نے کہا کہ یونیورسٹی نے کانگریس کے دوران سماجی علوم کے قلمکاروں کی ایک ڈائرکٹری بعنوان ’’سفیرانِ سماجی علوم‘‘ کا اجراء کرنے کا ارادہ کیا ہے۔ انہوں نے تمام سماجی علوم کے قلمکاروں سے گزارش کی ہے کہ اردو میں سماجی علوم پر اپنی تحریر کی ہوئی تفصیلات کو 15/ نومبر تک روانہ کردیں۔ کانگریس کے لیے تلخیص داخل کرنے کی آخری تاریخ 20؍ اکتوبر ہے اور تلخیص کی منظوری کی اطلاع 30؍ اکتوبر کو دی جائے گی۔ مکمل مقالہ 15/ نومبر تک داخل کیا جاسکتا ہے جبکہ کانگریس میں شرکت کے لیے یکم / دسمبر تک نام رجسٹر کروایا جاسکتا ہے۔
مزید تفصیلات nusscmanuu@gmail.com ،040-23008327، 9502044291یا 8897088795 یا www.manuu.ac.in سے حاصل کی جاسکتی ہیں۔