بیوی کی محبت میں

اگرانسان کے حوصلہ بلند ہوتو وہ کچھ بھی کرسکتا ہے ایسے ہی ایک واقعہ میں بیوی کی محبت میں شوہر نے کنواں کھوددیا۔

ریاست مہراشٹرا واشم ضلع کے گاوں کلمبیشور سے تعلق رکھنے والا بابو راو تام جی محنت مزدوری کرکے اپنا اور اپنے بیوی بچوں کاپیٹ پالتا ہے۔ اس کا تعلق دلت خاندان سے ہے اس کی بیوی سنگیتا پانی لانے کے لئے گاوں کے ایک مکان میں موجود کنویں پر گئی ہوئی تھی جہاں مکان مالکن نے اس کی بے عزتی کرتے ہوئے وہاں سے بھجوادیا۔ بیوی کی بے عزتی پر شوہر برہم ہوگیا اور اس نے لڑائی جھگڑا کرنے کے بجائے ایک منصوبہ بنایا اور اپنی بیوی کے لئے کنواں کھودنے کا فیصلہ کیا۔ قریب کے گاوں جاکر اس نے سبل اور پھاوڑا خریدا اور کنواں کھودنے کا کام کرنے لگا۔ یہ مزدور روزانہ گھر چلانے کے لئے مزدوری کرتے ہوئے 4 گھنٹے کنواں کھودنے کے لئے صرف کرنے لگا ۔

قریب میں دو بورویل پہلے سے موجود تھے۔ گاوں والوں نے اسے سمجھایا کہ یہاں پانی نہں نکلے گا اور اس کی محنت بیکار ہوجائے گی لیکن جب جنون سر چڑھ کر بولتا ہے تو انسان کسی کی نہیں سنتا۔ اسی جنون میں 40 دن میں اس نے کنواں کھود دیا۔ اس کنویں سے پانی بھی نکلا جس سے گاوں کے لوگ بھی فائیدہ اٹھارہے ہیں۔