March 05, 2021

باپ کے ہاتھوں زندہ جلادئیے جانے والے کم عمربیٹے کی موت

باپ کے ہاتھوں زندہ جلادئیے جانے والے کم عمربیٹے کی موت

حیدرآباد 21 جنوری (اردولیکس) حالت نشہ میں شرابی باپ کی جانب سے ٹرپنٹائن جسم پر ڈالتے ہوئے دس سالہ بیٹے کو زندہ جلادینے کے واقعہ میں جھلس جانے والے لڑکے کی علاج کے دوران گاندھی اسپتال میں موت ہوگئی۔اس واقعہ میں یہ لڑکا 50فیصد سے زائد جھلس گیا تھا۔اس واقعہ کے ساتھ ہی پولیس نے اس لڑکے کے باپ بالو کے خلاف معاملہ درج کرکے اس کو عدالتی تحویل میں دے دیاتھا۔پولیس کے مطابق یہ خاندان شہر حیدرآبادکے کوکٹ پلی ہوزنگ بورڈ کالونی پولیس اسٹیشن کے حدود میں روڈنمبر2کے ایک سرکاری اسکول کے قریب جھونپڑی میں رہتاتھا۔اس لڑکے کی شناخت چرن کے طورپر کی گئی ہے۔

Post source : urduleaks