حیدرآباد کے راجیو گاندھی انٹرنیشنل ایئرپورٹ میں یکم اپریل سے یو ڈی ایف چارج میں اضافہ

حیدرآباد انٹرنیشنل ایئرپورٹ (GHIAL) کو ایئر پورٹس اکنامک ریگولیٹری اتھارٹی (AERA) نے ڈومیسٹک اور انٹرنیشنل مسافروں پر عائد کئے جانے والے کسٹمر ڈویلپمنٹ فیس (UDF) میں بتدریج اضافہ کرنے کی اجازت دے دی ہے۔ یہ اضافہ آیندہ  مالی سال (1 اپریل 2022) سے شروع ہوگا۔ ریگولیٹری اتھارٹی نے راجیو گاندھی انٹرنیشنل ایئرپورٹ کو  (اپریل 2022 – مارچ 2026) کے لیے UDF ٹیرف پر نظر ثانی کی تجاویز کو منظوری دی ہے

جس کے تحت یکم اپریل 2022 سے ڈومیسٹک مسافروں کو 480 روپے بطور UDF ادا کرنا ہوں گے۔ فی الحال مسافروں سے یہ رقم 281 روپے وصول کی جا رہی ہے۔ انٹرنیشنل مسافروں کو موجودہ 393 روپے کے بجائے 700 روپے ادا کرنے ہوں گے۔ 31 دسمبر 2025 تک ڈومیسٹک مسافروں کو  750 روپے اور انٹرنیشنل  مسافروں کے لیے 1500 روپے تک اضافے کا امکان ہے۔ اور مارچ 2026  کے اختتام سے تین ماہ قبل یو ڈی ایف چارج ڈومیسٹک مسافروں کے لیے 500 روپے اور انٹرنیشنل  مسافروں کے لیے ایک ہزار روپے کر دیا جائے گا۔ یہ خیال کیا جاتا ہے کہ پچھلے مہینوں میں کمی چوتھی ریگولیٹری مدت کے دوران معقول طور پر فیس کا تعین کرنے میں مدد دے گی۔

حقیقت میں حیدرآباد ایئرپورٹ  نے دو ماہ قبل یو ڈی ایف میں ترمیم کے لیے تجاویز پیش کیں۔جس میں یکم اکتوبر سے ڈومیسٹک مسافروں کے لیے یو ڈی ایف کا کرایہ 281 روپے سے بڑھا کر 608 روپے اور انٹرنیشنل مسافروں کا کرایہ 393 روپے سے بڑھا کر 1300 روپے کر دینے کی تجاویز تھی ۔ لیکن اکنامک ریگولیٹری اتھارٹی نے یکم اپریل 2022 سے اس کی اجازت دی ہے