نابالغ بچے کا جنسی استحصال اور ویڈیو گرافی۔ حیدرآباد میں خاتون کے خلاف کیس

Photo imagine

حیدرآباد: حیدرآباد کے بنجارہ ہلز پولیس اسٹیشن میں بنگلور کی ایک خاتون پر اپنے قریبی رشتے دار نابالغ لڑکے کے جنسی استحصال اور اسکی ویڈیو گرافی کرتے ہوئے بلیک میل کے الزام میں مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔ بنجارہ ہلز پولیس کے مطابق ایک خاتون نے مبینہ طور پر اپنے رشتے دار 14 سالہ 9 ویں جماعت کے طالب علم کو چارمینار کے قریب ایک لاج میں لے جاکر اسکے ساتھ جنسی زیادتی کی۔

خاتون پر الزام ہے کہ اس نے اپنے سابق شوہر کی مدد سے اس شرمناک حرکت کی فون میں فلم بندی کروائی۔ بعد ازاں اس نے لڑکے کو ویڈیو وایرل کردینے کی دھمکی دیتے ہوئے اسے بلیک میل کرتے ہوئے تقریباً 200 گرام وزنی سونے کے زیورات اور 6 لاکھ روپے وصول کئے۔

یہ واقعہ اس وقت سامنے آیا جب لڑکے کی ماں نے گھر میں رکھے سونے کے زیورات اور نقدی غائب ہونے پر اپنے بیٹے سے پوچھ تاچھ کی اور حقیقت کا پتہ چلنے پر اس نے پولیس سے شکایت کی۔ پولیس نے خاتون کے خلاف تعزیرات ہند کی مختلف دفعات کے علاوہ پوکسو ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کیا۔