جنرل نیوز

تیستا سیتلواد کی گرفتاری کی مذمت، فوری رہائی کا مطالبہ

بنگلور: اسوسی ایشن فار پروٹیکشن آف سیول رائٹس (اے پی سی آر) کرناٹک چاپٹر نے حقوق انسانی کی علمبردار نیز گجرات فساد متاثرین کو انصاف دلانے کیلئے پیش پیش رہنے والی سماجی کارکن تیستا سیتلواد اور گجرات کے سابق ڈی جی پی آربی سری کمار کی گرفتاری کو "انصاف کا گلا گھونٹنے” کے مترادف قرار دیتے ہوئے ان کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔اخباری بیان جاری کرتے ہوئے اے پی سی آر نے تیستا سیتلواد کو انسانی حقوق کی ناقابل تسخیر محافظ قراردیا اور گجرات اے ٹی ایس کی سپریم کورٹ کے حالیہ فیصلے کا حوالہ دیتے ہوئے مشکوک بنیادوں پر تیستا کی گرفتاری کی سخت مذمت کی۔

اے پی سی آر کرناٹک چاپٹر کے جنرل سکریٹری ایڈوکیٹ محمد نیاز نے اپنے بیان میں کہا کہ "یہ ناقابل قبول ہے کہ شہریوں کے انصاف کے لیے لڑنے والے شخص پر ثبوت گھڑنے اور خصوصی تحقیقاتی ٹیم کو گمراہ کرنے کا الزام لگایا جائے”۔ اے پی سی آر ان کی رہائی سمیت ان پر لگائے گئے جھوٹے کیس کو واپس لینے اور ہراساں کرنا بند کرنے کا مطالبہ کرتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ تیستا نفرت اور فرقہ واریت کے خلاف ایک مضبوط آواز ہے اور انسانی حقوق کا دفاع کرنا کوئی جرم نہیں ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اے پی سی آر گجرات کے سابق ڈائریکٹر جنرل آف پولیس (ڈی جی پی) آر بی سری کمار کی گرفتاری کی بھی مذمت کرتی ہے اور ان کی بھی رہائی کا مطالبہ کرتی ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button