جنرل نیوز

عادل آباد کے بالاشنکر کرشنا کو 79 مرتبہ خون کا عطیہ دینے کا اعزاز ۔ عالمی یوم بلڈ ڈونیشن کے موقع پر خون کا عطیہ دینے کی اپیل

عادل آباد _ 13 جون ( اردولیکس) ریڈ کراس سوسائٹی اور دیگر رفاہی فلاحی تنظیموں سے وابستہ عادل آباد کے سماجی کارکن بالاشنکر کرشنا کو 79 بار خون کا عطیہ کرنے پر ریاست کے دارالحکومت راج بھون میں اس وقت کے گورنر تلنگانہ شری نرسمہن گاری کے ساتھ ریاست کا بہترین خون عطیہ کرنے والا ایوارڈ حاصل ہوا تھا

۔14 جون خون عطیہ کرنے کا عالمی دن کے طور پر منایا جاتا ہے۔تمام عطیات میں بہترین عطیہ خون کا عطیہ ہے۔خون کا عطیہ ہر تین ماہ بعد کیا جا سکتا ہے۔خون کا عطیہ سڑک حادثات میں زخمی ہونے والوں کے لیے۔حاملہ خواتین کے لیے،سروائیکل کینسر میں مبتلا افراد کے لیے،خون کی کمی میں مبتلا افراد،ہنگامی صورت حال میں سائنسی علاج میں خون کی منتقلی کے لیے یہ عطیہ کام آتا ہے۔خاص طور پر ان کے لیے جن کے خون کے گروپ دستیاب نہیں ہیں۔

جب آپ فارغ التحصیل ہو جائیں تو اپنی زندگی کے کسی بھی یادگار دن پر خون کا عطیہ دیں اور اپنی سخاوت کا مظاہرہ کریں۔خون کا عطیہ ایک بہترین انسانی خدمت ہے۔خون دینے والوں کو حقیقی ہیرو بننے دیں۔آئیے بچائیں،خون کا عطیہ کریں 18 سے 56 سال کی عمر کے نوجوان مرد و خواتین خون کا عطیہ کرسکتے ہیں،بالواسطہ طور پر خون کا عطیہ دیں۔ریڈ کراس سوسائٹی ڈسٹرکٹ عادل آباد تلنگانہ کے نائب صدر و یوتھ ایسوسی ایشنز کے ضلع صدر کی حیثیت سے بالاشنکر کرشنا نے اب تک متعدد سماجی تقریبات میں خون کا عطیہ دیا ہے

۔اب تک 8 ضلع کلکٹر اور ایس پی وزراء کے ہاتھوں بالاشنکر کرشنا نے توصیفی ناموں کے ساتھ ساتھ اس موقع پر سروس ایوارڈ حاصل کیے ہیں۔تلنگانہ ایمرجینس ڈے کے حوالے سے گزشتہ 6 سالوں سے پولیس شہداء یادگاری دن کے موقع پر ضلع ایس پی کے زیراہتمام خون کے عطیہ کیمپس کا انعقاد کیا گیا ہے جس میں عوام کو خون دینے کی ترغیب دیتے آرہے ہیں۔بالاشنکر کرشنا کا عزم ہے کہ ہر ایک کو 100 بار خون کا عطیہ دے کر اور سب کی بخشش حاصل کرکے اس نسل کے نوجوانوں کے لیے سماجی خدمت کے ایک نئے باب کا آغاز کرنے کی ترغیب دینا چاہتے ہیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button