جنرل نیوز

خواتین کے ذریعہ صوفیائے کرام کے پیغام کو عام کیاجائے گا :حضرت نصیرالدین چشتی

آل انڈیا صوفی سجادہ نشین کونسل کی جانب سے ”اسلام صوفی ازم اینڈ ویمن ایمپاور منٹ“ کے عنوان سے سیمینار منعقد  

خواتین کے ذریعہ صوفیائے کرام کے پیغام کو عام کیاجائیگا :حضرت نصیرالدین چشتی

آل انڈیا صوفی سجادہ نشین کونسل کی جانب سے ”اسلام صوفی ازم اینڈ ویمن ایمپاور منٹ“ کے عنوان سے سیمینار منعقد

نئی دہلی28مئی ( پریس ریلیز) اسلام صوفی ازم اینڈ ویمن ایمپاور منٹ کے عنوان سے آج ایوان غالب میں آل انڈیا صوفی سجادہ نشین کو نسل کی جانب سے سیمینار منعقد کیا گیا جس کی صدارت سید نصیر الدین چشتی ( دیوان اجمیر شریف ) نے کی ۔

اپنے خطبہ صدارت میں سید نصیر الدین چشتی نے کہاکہ درگاہوں وخانقاہوں کی فلاح وبہبودگی کیلئے پُرزور طریقے سے کام کرنا ہے ، صوفی ازم کے پیغامات کو عام کرناہے، ٹی وی اور فلموں میں جو اسلام کی شبیہ کودکھا یا جا تا ہے وہ اسلام قطعی نہیں ہے ،البتہ ایسے میں ہماری کوشش ہے کہ صرف خواتین کوہی شامل کرکے گھر گھر میں صوفیوں واولیائے کرام کے پیغامات کو عام کیاجائے،ساتھ ہی خواتین کوترقی یا فتہ کام کراناہے ۔انہوں نے مزید کہاکہ ہم نے اپنی تنظیم کے ساتھ 800سے زیادہ درگاہوں وخانقاہوںکو جوڑا ہے ،البتہ آگے کوشش رہے گی کہ مزیدعورتوںکو تنظیم سے جوڑا جائے، کیو نکہ مرد تو کسی نہ کسی تنظیم سے وابستہ رہتے ہیں، لیکن خواتین کو تنظیم سے جوڑکرانہیں بااختیار وترقی یافتہ بنا نا ہے۔

خواجہ محمدسید نظام الدین اولیاءؒ درگاہ شریف کے گدی نشین سید فرید احمد نظامی نے کہا کہ سبھی مذہب ومسلک کے افراد صوفی سنتوں کے پاس جاتے ہیںاور وہاں پر روحانی فیض پاتے ہیں،یہی ہندوستان کی خوبصورتی ہے ،نیز یہی اولیاء کا پیغام ہے ، ہمارا مقصد ہے کہ صوفی ازم کے پیغامات کو ہمہ وقت عام کر نا ہے اورشدت پسندی کے خلاف کھڑا ہوکر نفرت کاخاتمہ کرنا ہے ،اسی کے بینر تلے ہم نے یہ تنظیم بنائی ہے اور آگے بھی مختلف ریاستوںپرتقاریب کا انعقاد کریں گے ۔انہوں نے بتایا کہ وقف ایکٹ کے علاوہ درگاہوں وخانقاہوں کیلئے ایک الگ سے بورڈبنانے کیلئے کافی وقت سے مطالبہ کررہے ہیں ،آگے بھی حکومت سے مطالبہ رہے گا کہ علیحدہ درگاہوںوخانقاہوںکابورڈبنایا جائے۔تنظیم کی دہلی انچارج افروز فاطمہ نے بتایا کہ اے آئی ایس ایس سی کافی وقت سے بزرگوںکی تعلیمات کے نشر واشاعت کیلئے کام کررہی ہے ،

لہذا اسی تنظیم کے تحت مستورات کی ٹیم بنائی گئی ہے،لہذاجوصوفی ازم کے آئیڈولوجی کے فروغ کیلئے کام کرے گی،نیز خواتین کو ترقی یافتہ بنا نا بھی ہماری اولین ترجیح ہے۔اس دوران ڈاکٹرمحسنہ پروین ،ڈاکٹر نعیمہ جعفر ،ڈاکٹر شائنہ تبسم ،ڈاکٹر بشری علوی رزاق ، ماہ نورسید،نفیسہ نصیر،خواجہ احمدفاطمہ،عبدالقادرقادری،عبدالوحید پاشاودیگر نے بھی اظہارخیال کیا ،جبکہ نظامت ڈاکٹرببلی پروین نے کی۔

متعلقہ خبریں

Back to top button