نیشنل

مکچر پیکٹ پرعربی لکھنے پراعتراض، سدرشن ٹی وی نے بھڑکائی نفرت کی آگ۔ سوشل میڈیا پرہنگامہ

نئی دہلی: ملک کی مشہورکمپنی ہلدی رام کی جانب سے ایک پیکٹ پرعربی زبانی میں تحریرپرآج صبح سے ہنگامہ کھڑا کردیا گیا ہے۔ ہلدی رام نے ’پھلاہاری مکچر‘ کے پیکٹ پر ڈسکرپشن (تفصیلات) عربی زبان میں درج کی ہے جسے اردو کہا جارہا ہے۔ اس مکچرکی تیاری میں کسی جانور کا تیل استعمال نہیں کیا جاتا یعنی صرف پھلوں کا ہی استعمال ہوتا ہے اس لیے نوراتری اوررمضان کے موقع پر ہندو مسلم دونوں طبقات اسے استعمال کرتے ہیں۔ اس مکچرکے پیکٹ پردیگرزبانوں کی طرح عربی میں بھی تفصیلات درج ہیں جس پربعض افراد کو پیٹ میں درد ہونے لگا اوراعتراض کیا جارہا ہے۔ اس معاملہ کی دیگرمعاملات کی طرح نفرت کو فروغ دینے والی خبروں کی تیاری میں مشہورسدرشن چینل کی ایک خاتون رپورٹرنے اٹھایا ہے۔ راجیہ سبھا رکن اور شیوسینا لیڈر پرینکا چترویدی نے اس ویڈیو کو شیئر کرتے ہوئے وزیر اطلاعات و نشریات انوراگ ٹھاکر سے سوال کیا ہے کہ کیا یہ ٹھیک ہے؟ کیا چینل کو ٹی آر پی کے لیے (ریسٹورینٹ) ملازمین کو پریشان کرنا شروع کرنا چاہئے اور زیادہ سے زیادہ نفرت پیدا کرنی چاہیے؟ کیا اس کے خلاف کوئی کارروائی نہیں ہونی چاہیے؟

متعلقہ خبریں

Back to top button