کیرالا میں کورونا سے خطرناک وائرس _ 13طلبہ متاثر !

حیدرآباد _ کیرالا میں حالیہ دنوں ہی کورونا وائرس کے کیسوں  کی تعداد میں کمی آئی ہے جس پر  وہاں کی حکومت نے پابندیوں کو ختم کردی ہے لیکن گزشتہ روز وہاں ایک اور نیا وائرس ” نورو وائرس ” سامنے آیا ہے جس سے چند طلبہ متاثر ہوئے ہیں وایناڈ ضلع کے پوکوڈ ٹاون میں واقع ویٹرنیری کالج کے 13 طلبہ نورو وائرس سے متاثر ہوئے ہیں بتایا جاتا ہے کہ یہ وائرس کورونا سے بھی زیادہ خطرناک ہے جو تیزی کے ساتھ ایک دوسرے میں پھیلتا ہے نورو وائرس کے کیس سامنے آنے کے بعد کیرالا کی حکومت چوکس ہوگئی ہے

جاریہ سال جولائی میں لندن میں نورو وائرس کی  وباء  شروع ہوئی تھی  مختصر عرصے میں متاثرہ افراد کی تعداد میں نمایاں اضافہ ہوا تھا ۔لندن میں پانچ ہفتوں میں 154 افراد نورو وائرس سے متاثر ہوئے تھے ۔ ڈاکٹروں نے بتایا  تھا کہ اس میں تیزی سے پھیلنے کی صلاحیت ہے۔ نورو وائرس کی اہم علامات پیٹ میں درد ، اسہال ، الٹی ، اور بخار ہیں  وائرس سے  متاثرہ شخص یا  آلودہ کھانے یا پانی کی چیزوں کے استعمال سے یہ وائرس پھیل سکتا ہے۔ بیماری کی علامات عام طور پر دو سے تین دن تک رہتی ہیں۔  اس وائرس کے لئے کوئی دوائی نہیں ہے