ہندوستان میں کورونا کی صورتحال دیکھ کر میرا دل ٹوٹ گیا ہے: پیٹرسن

حیدرآباد_ انگلینڈ کے سابق کرکٹر کیون پیٹرسن  نے بھارت میں جاری کورونا وائرس کی وباء سے پیدا ہونے والے  بحران پر تشویش کا اظہار کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ حقیقت ہے کہ بہت سے علاقوں کے ہاسپٹلس  میں بیڈ اور آکسیجن کی عدم دستیابی کے سبب بہت سارے کرونا متاثرین اپنی زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ پیٹرسن نے ٹویٹر پر کہا کہ ہندوستان کی صورتحال سے انہیں شدید دکھ ہورہا ۔ پیٹرسن نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ بی سی سی آئی نے اعلان کیا کہ وہ آئی پی ایل 2021 کو غیر معینہ مدت کے لئے ملتوی کررہا ہے کیونکہ کچھ ٹیموں کے بہت سارے کھلاڑیوں اور عملہ بھی کورونا وائرس سے متاثر ہوئے ہیں

پیٹرسن نے کہا کہ اس ملک میں ان حالات کو  دیکھ کر میرا دل ٹوٹ گیا ہے ۔ کورونا کے دوران لوگوں کی مشکلات اور دل دہلانے والے واقعات ہر ایک کو متاثر کررہے ہیں۔ لیکن انھیں امید ہے کہ جلد ہی ملک کے عوام وبائی بیماری سے باہر ہو جائیں گے۔

واضح رہے کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو دیکھتے ہوئے آئی پی ایل انتظامیہ نے اس سیزن کے سبھی میچ رد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ یعنی یہ ٹورنامنٹ ملتوی کر دیا گیا ہے، اور بقیہ ٹورنامنٹ کب ہوں گے، اس سلسلے میں کوئی وضاحت بھی نہیں کی گئی ہے۔ دراصل چار آئی پی ایل ٹیموں سے ابھی تک کئی کھلاڑی کورونا پازیٹو ہو چکے ہیں۔ دہلی کیپٹلز کے امت مشرا بھی آج کورونا پازیٹو پائے گئے۔ اس سے قبل سنرائزرس حیدر آباد کے ردھیمان ساہا پازیٹو ہوئے تھے۔ کولکاتا نائٹ رائیڈرس کے کچھ کھلاڑی پہلے ہی کورونا متاثر پائے جا چکے ہیں۔ ان سب کے پیش نظر بی سی سی آئی کے نائب سربراہ راجیو شکلا نے بتایا ہے کہ آئی پی ایل کو اس سیشن کے لیے ملتوی کیا جا رہا ہے