انٹر نیشنل

اب تک 12 مسلم ممالک نے پیغمبر اسلام کے خلاف تبصرے پر کیا احتجاج

حیدرآباد _ 7 جون ( اردولیکس ڈیسک) حکمران جماعت بی جے پی  کے برطرف ترجمان نوپور شرما اور نوین کمار جندال کے پیغمبر اسلام کے بارے میں متنازعہ ریمارکس کے خلاف مسلم ممالک کی جانب سے شدید ردعمل کا سلسلہ جاری ہے۔ عمان، متحدہ عرب امارات، مالدیپ، انڈونیشیا اور اردن اس فہرست میں تازہ طور پر شامل ہوگئے  ہیں۔ اس طرح اب تک 12 مسلم ممالک نے پیغمبر اسلام کے خلاف کئے گئے تبصروں کے خلاف احتجاج کیا ہے

جب کہ بی جے پی حکومت  اور زعفرانی کیمپ نے نوپور شرما اور جندال کے خلاف فوری کارروائی کرتے ہوئے تبصروں سے خود کو دور کرنے میں کوشس کی ہے۔ ایک بیان میں، بی جے پی نے یہ بھی کہا کہ وہ ہر مذہب کا احترام کرتی ہے اور "کسی بھی مذہب کی مذہبی شخصیات کی توہین کی سختی سے مذمت کرتی ہے”۔

نوپور شرما اور جندال دونوں نے اپنے تبصروں پر معذرت بھی کی ہے اور کہا ہے کہ ان کا مقصد کسی مذہبی جذبات کو ٹھیس پہنچانا نہیں تھا۔ جب کہ شرما نے کہا کہ بھگوان شیو کی مسلسل تذلیل نے اس کا رد عمل "غصے میں” کیا، جندل نے واضح کیا کہ وہ صرف ایک سوال پوچھ رہے تھے اور اس کا یہ مطلب نہیں کہ وہ کسی مذہب کے خلاف ہیں۔ اس کے باوجود ان دونوں کے ریمارکس کے خلاف مسلم ممالک میں غم و غصہ پایا جاتا ہے

یہاں ان ممالک کی فہرست ہے جنہوں نے اب تک پیغمبر اسلام کے خلاف تبصرے پر احتجاج کیا ہے:. قطر، سعودی عرب. کویت، اردن ،عمان،  متحدہ عرب امارات،  پاکستان،  افغانستان، بحرین، مالدیپ، انڈونیشیا، لیبیا شامل ہیں

متعلقہ خبریں

Back to top button