افغانستان میں ایک شیعہ مسجد میں طاقتور بم دھماکہ _ 100 افراد جاں بحق۔کئی افراد زخمی

حیدرآباد _ افغانستان میں جمعہ کی نماز کے دوران ایک شیعہ مسجد میں طاقتور بم دھماکہ پیش آیا۔جس میں کم از کم 100 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوئے۔ یہ دھماکہ افغانستان کے صوبے قندوز میں پیش آیا ۔ بمبار نے دوپہر کے فورا بعد ایک شیعہ مسجد پر  کیا ،  افغان پولیس نے بتایا کہ حملہ آور نے دوپہر کے بعد مسجد پر حملہ کیا۔ زخمیوں کو فوری طور پر ہسپتال منتقل کیا گیا۔ ابھی تک کسی دہشت گرد گروپ نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔ دھماکے کے بعد  مسجد میں جگہ جگہ لاشیں کے بکھرے ہوئے تھے اور زخمیوں کو ہسپتال منتقل کرنے کے کئی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوچکے ہیں۔

تبیان کے ترجمان جبیہ اللہ مجاہد نے دھماکے کی تصدیق کی۔ صوبہ قندوز کے شہر بندر شہر میں  شیعہ مسجد پر دوپہر کے بعد بمبار نے حملہ کیا۔ اس واقعے میں کئی جانیں ضائع ہوئیں۔ انہوں نے کہا کہ طالبان فورسز واقعے کی تحقیقات کر رہی ہیں۔ واقعے کے بارے میں مزید تفصیلات ابھی معلوم نہیں ہوسکی ہیں۔ شیعہ مسلمان جو کہ افغانستان میں اقلیت ہیں ، کو طویل عرصے سے آئی ایس عسکریت پسندوں نے نشانہ بنایا ہے۔ شبہات ہیں کہ یہ حملہ آئی ایس کے عسکریت پسندوں نے کیا ہو گا جنہوں نے حال ہی میں کابل کے ہوائی اڈے سمیت کئی دیگر علاقوں میں بم دھماکے کیے ، جب طالبان کا افغانستان پر قبضہ ہوا تھا ۔