ایسا بھی ہوتا ہے۔ٹکر دے کرنوجوان کا کردیا گیا قتل۔تلنگانہ میں وادات

حیدرآباد: ریاست تلنگانہ ضلع رنگاریڈی کے آمنگل میں قتل کی عجیب وغریب واردات پیش آئی۔ ابھی تک آپ نے پڑھا، سنا یا دیکھا ہوگا کہ کسی بھی شخص کا قتل ہتھیارکے ذریعہ کیا جاتا ہے یا پھرگولی ماردی جاتی ہے لیکن یہاں ایسا کچھ نہیں ہوا بلکہ گاڑی سے ٹکر دے کرایک نوجوان کی جان لے لی گئی۔

پولیس نے بتایا کہ میڈی گٹہ تانڈہ سے تعلق رکھنے والے بال کشن اور نرنجن سنگھ کے خاندانوں کے درمیان گذشتہ 20 سال سے اراضیات تنازعہ ہے وہ دونوں آپس میں بھائی بتائے گئے ہیں۔حال ہی میں بال کشن سنگھ کے خاندان سے جان کا خطرہ لاحق ہونے کی شکایت نرنجن سنگھ اور راجیش سنگھ نے آمنگل پولیس اسٹیشن میں درج کروائی۔ دونوں بھائی حملہ ہونے کے خوف سے پریشان تھے۔کل وہ اپنے دوستوں اور ساتھیوں کے ساتھ کاروں میں میڈی گٹہ کیٹ کے پاس واقع کھیت پہنچے۔ اس دوران بال کشن سنگھ اپنے حامیوں کے ہمراہ لاری لے کر وہاں پہنچا اس نے دوکاروں کو ٹکردے دی۔

انہوں نے راجش سنگھ کے دوست 26 سالہ سندیپ سنگھ کو ٹکر دے کراس کا قتل کردیا۔ قتل کی اس واردات نے حادثات پرسوال کھڑے کردئیے ہیں اوریہ شکوک وشبہات پیدا ہوتے ہیں کہ کیا تمام حادثات اتفاقی نہیں ہوتے؟ جان بوجھ کر جان لینے کیلئے بھی ٹکردی جاسکتی ہے؟