انٹر نیشنل

جسٹس عائشہ ملک ، پاکستان سپریم کورٹ کی پہلی خاتون جج مقرر

جسٹس عائشہ ملک کو پاکستان سپریم کورٹ کی پہلی خاتون جج بننے کا اعزاز 

حیدرآباد _ 7 جنوری ( اردو لیکس ڈیسک) جسٹس عائشہ ملک کو سپریم کورٹ آف پاکستان کی پہلی خاتون جج مقرر کر دیا گیا ہے۔ جمعرات کو چیف جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں پاکستان جوڈیشل کمیشن (جے سی پی) نے جسٹس عائشہ ملک کی پانچ ووٹوں کی اکثریت سے منظوری دی۔ لاہور ہائی کورٹ کی جسٹس عائشہ ملک کو سپریم کورٹ کی پہلی خاتون جج مقرر کر دیا گیا ہے۔

جسٹس عائشہ ملک نے صنفی مساوات، خواتین کو بااختیار بنانے، خواتین کے حقوق اور خواتین کو ہراساں کرنے کے مقدمات میں تاریخی فیصلے سنائے۔ پاکستان میں خواتین کے حقوق کی خلاف ورزیوں پر مسلسل تنقید کے تناظر میں ایک خاتون کو پاکستان کی پہلی خاتون چیف جسٹس مقرر کیا گیا ہے۔

جسٹس عائشہ ملک نے لاہور کے پاکستان کالج آف لاء (PCL) سے قانون کی تعلیم حاصل کی۔ اس کے بعد انہوں نے لندن کے ہارورڈ لاء اسکول سے قانون میں ماسٹر ڈگری مکمل کی۔ انہوں نے 1997 سے 2001 تک کراچی میں بطور وکیل کام کیا۔ 2012 میں لاہور ہائی کورٹ کے جج کے طور پر مقرر ہوئی ۔ انہوں نے پاکستان میں مختلف ہائی کورٹس، ڈسٹرکٹ کورٹس، بینکنگ کورٹس، خصوصی ٹربیونلز اور ثالثی ٹربیونلز میں خدمات انجام دیں۔ جسٹس عائشہ ملک انٹرنیشنل ایسوسی ایشن فار ویمن ججز (IAWJ) کی رکن بھی ہیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button