عادل آباد رمس ہاسپٹل میں مختلف جائیدادوں پر تقررات _ درمیانی افراد کے دھوکہ میں نہ آنے ڈائریکٹر کا مشورہ

عادل آباد _ عادل آباد کے رمس سوپر اسپیشالیٹی اسپتال میں خالی جائیدادوں پر بھرتی کے لئے ریاستی حکومت کی جانب سے حال ہی میں نوٹیفکیشن جاری کیا گیا تھا۔جس کے بعد سے درخواست داخل کرنے کے لئے متحدہ عادل آباد کے نوجوانوں کی ایک بڑی تعداد ایجنسی سے رجوع ہورہی ہیں۔وہیں دوسری جانب تقررات میں دھاندلیوں کو لیکر مختلف سیاسی قائدین اور نوجوانان میں شکوک وشبہات کا بازار گرم ہوگیا تھا۔آج تمام شکوک و شبہات کو دور کرتے ہوئے عادل آباد رمس ڈائریکٹر بلرام نائک نے ایک پریس نوٹ جاری کرتے ہوئے امیدواروں سے اپیل کی ہے کہ عادل آباد کے سوپر اسپیشالیٹی اسپتال کے تقررات میں درمیانی افراد کے بہکاوے میں نہ آئیں۔درمیانی افراد کے بہکاوے میں آکر اگر کسی نے بھی رقم جمع کروائی تو رمس عملہ اس کا ذمہ دار نہیں ہوگا۔تقررات کو لیکر کسی بھی قسم کا دھوکا دہی کا معاملہ پیش آنے پر ضلع کلکٹر یا رمس ڈائریکٹر اور ضلع ایمپلائمنٹ آفیسر کو تحریری شکایت درج کروائیں۔جائیدادوں کی بھرتی میں جن ایجنسیوں کو ذمہ داری دی گئی ہے اگر انکی جانب سے بھی لین دین کا مطالبہ کیا جاتاہے تو ان پر بھی سخت کاروائی کی جائے گی۔انہوں نے مزید کہا کہ میرٹ کی بنیاد پر تقررات عمل میں لائے جائیں گے۔مزید تفصیلات یا شکایت کے لئے ان 7981763086 /9701501055نمبرات پر رابطہ کیا جاسکتا ہے۔