چھتیس گڑھ میں بی جے پی کے سابق وزیر راجندر پال سنگھ بھاٹیا نے خودکشی کرلی!

حیدرآباد _ چھتیس گڑھ کے سابق وزیر اور بی جے پی کے سینئر لیڈر راجندر پال سنگھ بھاٹیا اتوار کو راجانندگاؤں ضلع میں ان کی رہائش گاہ پر مردہ پائے گئے۔پولیس حکام نے بتایا کہ 72 سالہ بھاٹیہ کی نعش اتوار کی شام لٹکی ہوئی پائی گئی اور پولیس تحقیقات کر رہی ہے کہ آیا یہ خودکشی ہے یا نہیں؟ کیونکہ وہاں سے خودکش نوٹ برآمد نہیں ہوا ہے۔

بی جے پی لیڈروں کے مطابق ، بھاٹیا  جاریہ  سال مارچ میں کورونا وائرس سے متاثر ہوئے تھے اس سے صحت یاب ہونے کے بعد بھی وہ ٹھیک نہیں تھے۔ضلع کے خججی اسمبلی حلقہ سے تین بار رکن اسمبلی منتخب ہوئے۔ بھاٹیہ چیف منسٹر رمن سنگھ کی قیادت میں بی جے پی کی پہلی حکومت میں تجارت اور صنعت کے وزیر تھے۔

2013 میں ، انھوں نے اسمبلی کے ٹکٹ سے محروم ہونے کی وجہ سے پارٹی کے خلاف بغاوت کی اور ریاستی انتخابات کے دوران خجی سیٹ سے آزاد امیدوار کے طور پر الیکشن لڑا۔ تاہم بعد میں وہ دوبارہ پارٹی میں شامل ہو گئے تھے