نیشنل

اومیکرون کا خوف _ مدھیہ پردیش ،گجرات میں رات کا کرفیو _ ممبئی میں دفعہ 144 اور دہلی میں پابندیاں

اومیکرون کا خوف _ مدھیہ پردیش ،گجرات میں رات کا کرفیو _ ممبئی میں دفعہ 144 اور دہلی میں پابندیاں 

حیدرآباد_ 23 دسمبر ( اردو لیکس) اومیکرون ویریئنٹ کا خوف پوری دنیا میں پھیلا ہوا ہے۔ ہندوستان میں بھی اومیکرون کے کیسس 346 ہو گئے ہیں۔ مرکزی حکومت اومیکرون پر مسلسل نظر رکھے ہوئے ہے۔اور ریاستوں کو ضرورت پڑنے پر رات کا کرفیو نافذ کرنے کی ہدایت دی ہے جس کے پیش نظر مدھیہ پردیش کی شیوراج چوہان حکومت نے اومیکرون کے خوف سے درمیان رات کا کرفیو نافذ کر دیا ہے جبکہ مدھیہ پردیش میں اومیکرون کا ایک بھی کیس درج نہیں ہوا ہے۔

چیف منسٹر شیوراج سنگھ نے کہا کہ اگر ضرورت پڑی تو کورونا وائرس پر قابو پانے کے لیے سختی بڑھائی جائے گی۔  نائٹ کرفیو رات 11 بجے سے صبح 5 بجے تک نافذ کیا گیا ہے۔آیندہ احکامات جاری ہونے تک رات کا کرفیو نافذ رہے گا۔

گجرات حکومت نے 31 دسمبر تک ریاست کے 9 شہروں میں رات کا کرفیو نافذ کیا ہے

مہاراشٹر حکومت نے اومیکرون کے کیسوں میں اضافہ کے پیش نظر ممبئی میں رات میں دفعہ 144 نافذ کردیا ہے جو 31 دسمبر تک جاری رہے گا۔

دہلی میں کرسمَس اور نئے سال کے جشن پر پابندیاں عائد کر دی گئی ہیں

ملک  میں اومیکرون کے کیسس 346 ہو گئے ہیں۔ مہاراشٹر میں سب سے زیادہ اومیکرون کیسس ہیں۔ مہاراشٹر میں اومیکرون کے  88 کیسس ہو گئے ہیں۔ جمعرات کو کرناٹک میں اومیکرون کے 34 کیسس سامنے آئے  ہیں۔ دہلی میں 57، تلنگانہ میں 38، تمل ناڈو میں 34، کیرالہ میں 29 اور ہریانہ اور آندھراپردیش میں ایک کیس رپورٹ ہوا ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button