نیشنل

مہاراشٹر میں اودے ٹھاکرے کی حکومت بحران میں _ سینئر وزیر یکناتھ شنڈے 20 ارکان اسمبلی کے ساتھ گجرات کی ہوٹل میں کیمپ _ شیوسینا میں بغاوت

ممبئی _ 21 جون ( اردولیکس) مہاراشٹر کی حکمراں مہا وکاس اکھاڑی ( شیوسینا، این سی پی اور کانگریس اتحاد) اس وقت ایک بڑے سیاسی بحران میں پڑ گئی ہے جب اس کے ایک سینئر وزیر – ایکناتھ شنڈے جن کا تعلق شیوسینا سے ہے نے پارٹی کے 20 ارکان اسمبلی کے ساتھ گجرات کے ایک ہوٹل میں کیمپ کئے ہوئے ہیں  سینئر وزیر کی اس حرکت کو  شیوسینا میں بغاوت قرار دیا گیا ہے گزشتہ روز ایم ایل  سی انتخابات میں بھی شیوسینا کے چند ارکان اسمبلی نے بی جے پی امیدوار کو ووٹ دیتے ہوئے انھیں کامیاب بنایا تھا جس سے شیوسینا کو ایک سیٹ سے محروم ہونا پڑا۔پارٹی کے ارکان اسمبلی کی کراس ووٹنگ سے پریشان شیوسینا سربراہ اودے ٹھاکرے کو آج اس پارٹی کے سینئر وزیر یکناتھ شنڈے نے 20 ارکان اسمبلی کو لے کر کیمپ لگا بیٹھے۔

شیوسینا میں اچانک مبینہ بغاوت کے بعد چیف منسٹر اودے ٹھاکرے آج دوپہر شیوسینا، کانگریس اور این سی پی کے ارکان اسمبلی کے ساتھ مشترکہ اجلاس طلب کیا۔

تو دوسری طرف شیوسینا کے سینئر لیڈر سنجے راوت نے کہا کہ یکناتھ شنڈے گجرات کے سورت میں ہونے کی اطلاع ملی۔  انھوں نے کہا کہ پارٹی میں سب کچھ ٹھیک چل رہا ہے

ایکناتھ شندے  توقع ہے کہ وہ جلد ہی پریس کو بریفنگ دیں گے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button