کورونا کا خوف۔ایک خاندان 15 ماہ سے گھر میں تھا بند

  حیدرآباد:کورونا کے خوف سے ایک خاندان نے خود کو تقریبا 15ماہ تک گھر میں بند کرلیا۔ یہ واقعہ آندھراپردیش کے مشرقی گوداوری ضلع کے کوڈالی گاوں میں پیش آیا۔گاوں کے سرپنچ سی گروناتھ کے مطابق تین افرادنے خود کو تقریبا 15ماہ سے اپنے مکان میں محدود کرلیا۔ مقامی شخص چیٹوگالابینی، اس کی بیوی اور دوبچےکوویڈ سے خوفزدہ تھے جنہوں نے تقریبا 15ماہ تک خود کو گھر میں بند کرلیااور اندر سے مکان کو قفل ڈال لیا۔آشاورکر یا کوئی اور والنٹرجوان کے گھر جاتے، واپس ہوجانے پر مجبور ہوتے کیونکہ دروازہ کھٹکھٹانے پر اس کاکوئی جواب نہیں دیاجاتا۔اس معاملہ کی اطلاع پولیس کو دی گئی جس نے وہاں پہنچ کر اس خاندان کو بچایا۔ان کی حالت کافی خراب تھی۔ان کے بال بڑھ گئے تھے۔ان افراد نے کئی دنوں سے نہایا بھی نہیں تھا۔ان تمام کو فوری طورپر سرکاری اسپتال منتقل کردیاگیاجہاں ان کاعلاج کیا جارہا ہے۔سرپنچ کے مطابق اگر یہ خاندان اسی طرح آئندہ تین ماہ زندگی گذارتا تواس خاندان کی موت یقینی تھی۔