بھارت میں انٹرنیٹ استعمال کرنے والوں کی تعداد 47 فیصد _ چار سالوں میں اسمارٹ فون استعمال کرنے والوں کی تعداد میں 40 فیصد کا اضافہ

حیدرآباد _ فی الحال وقت بھارت میں انٹرنیٹ استعمال کرنے والوں کی تعداد 47 فیصد تک پہنچ گئی ہے۔ ملک میں 15 سال سے زیادہ عمر کے انٹرنیٹ صارفین کی تعداد 2017 میں 19 فیصد تھی جو  بڑھ کر 2021 تک 47 فیصد ہو گئی ہے ۔ دہلی 72 فیصد، مہاراشٹر 55 فیصد، تمل ناڈو 53 فیصد اور آسام 37 فیصد کے ساتھ سب سے آگے ہیں۔

 

لرننگ انیشیٹوز ان ریفارمس  فار نیٹ ورک اکنامکس ایشیا (LIRNE Asia) اور انڈین کونسل فار ریسرچ آن انٹرنیشنل اکنامک ریلیشنز (ICRIER)  کے مشترکہ سروے میں انٹرنیٹ کے استعمال سے متعلق کئی باتیں سامنے آئی ہیں ۔ کینیڈا کے انٹرنیشنل ڈویلپمنٹ ریسرچ سینٹر کے تعاون سے کیے گئے اس سروے میں ملک بھر کے 7000 افراد سے ڈیٹا اکٹھا کیا گیا اور اس نتائج جاری کئے گئے ۔

 

صرف ایک سال کے اندر یعنی 2020-21 میں 13.2 کروڑ لوگ انٹرنیٹ استعمال کرنے لگے۔ انٹرنیٹ استعمال کرنے والوں میں 57 فیصد مرد اور 36 فیصد خواتین ہیں۔ شہری علاقوں میں  55 فیصد اور دیہی علاقوں میں یہ 44 فیصد لوگ انٹرنیٹ استعمال کرتے ہیں ۔ ان میں سے 15-25 سال کی عمر کے 71 فیصد افراد انٹرنیٹ استعمال کرتے ہیں۔ عمر کے ساتھ اس کا استعمال کم ہو جاتا ہے۔ اعلیٰ تعلیم کے حامل 89 فیصد انٹرنیٹ استعمال کرتے ہیں، جب کہ 9 فیصد ناخواندہ اسے استعمال کرتے ہیں۔ 54 فیصد ملازم اور 44 فیصد بے روزگار انٹرنیٹ استعمال کرتے ہیں۔ 2017 میں شہری اور دیہی علاقوں کے درمیان فرق 48 فیصد تھا لیکن اب یہ کم ہو کر 20 فیصد رہ گیا ہے۔

 

پچھلے چار سالوں میں اسمارٹ فون استعمال کرنے والوں کی تعداد میں 40 فیصد اضافہ ہوا ہے۔ 2017 میں، 55 فیصد کے پاس بیسک فون تھا 16 فیصد کے پاس فیچر فون  اور 28 فیصد کے پاس اسمارٹ فونز تھے، لیکن اب یہ تناسب بڑھ کر بلترتیب 26 فیصد، 6فیصد  اور 68 فیصد ہو گیا ہے۔