اسپشل اسٹوری

زیادہ سم کارڈ رکھنے والوں کے لئے اہم اطلاع۔۔۔ورنہ

زیادہ سم کارڈ رکھنے والوں کے لئے اہم اطلاع۔۔۔ورنہ تمام سم کارڈ بلاک کردئے جائیں گے 

حیدرآباد _ 9 دسمبر ( اردو لیکس) ایک دور تھا جب موبائل فون کمپنیوں نے مفت کالنگ کی سہولت شروع کی تھی اس وقت روزانہ ایک سم کارڈ بھی لی جاتی تھی۔ ایسے دن بھی ہم نے دیکھے ہیں جب ایک روپے میں سم کارڈ دیا جاتا تھا ۔ اس وقت آدھار کارڈ کا کوئی تصور نہیں تھا اور جب آدھار کارڈ آگیا اور سم کارڈز کو آدھار نمبر کے ساتھ جوڑنے کو لازمی کردیا گیا اس وقت سے سم کارڈ کی فروخت میں بھی کمی ہوگئی۔اب  آپ کو سم کارڈ حاصل کرنے کے لیے اپنا آدھار نمبر دینا ضروری ہوگیا ہے ۔ اگر آپ کے پاس آدھار نمبر نہیں ہے تو آپ کو سم کارڈ جاری نہیں کیا جائے گا۔  اب یہ معلوم کرنے کی ٹیکنالوجی بھی آگئی  ہے کہ آپ کے  آدھار نمبر پر کتنے سم کارڈ ہیں۔

 

تاہم جن لوگوں نے بہت پہلے  زیادہ سم کارڈ لیے ہیں انہیں فوری طور پر استعمال میں نہ آنے والے سم کارڈز کو منقطع کرنا ہوگا۔ بصورت دیگر  استعمال میں ہونے والے سم کارڈز بھی بلاک ہو سکتے ہیں۔اس کے علاوہ ایک آدھار نمبر پر صرف 9 سم کارڈ جاری کیے جاتے ہیں۔ اگر 9 سم کارڈز کی حد  زیادہ ہو جائے تو اس میں استعمال ہونے والے سم کارڈز کی فوری تصدیق کی جائے۔ تصدیق شدہ نمبروں کے علاوہ باقی تمام نمبر  کو غیر فعال کر دیا جائے گا۔

 

 

جموں و کشمیر اور شمال مشرقی ریاستوں میں ایک  آدھار نمبر پر صرف 6 سم کارڈ لئے جا سکتے ہیں جب کہ دیگر ریاستوں میں 9 تک سم کارڈز  حاصل کرنے کی سہولت ہے

ٹیلی کمیونیکیشن ڈپارٹمنٹ نے کہا کہ اگر کوئی  سبسکرائبر نے 9 سے زیادہ سم کارڈ لیے ہیں تو انھیں تمام  نمبروں کو دوبارہ ویری فائی ( تصدیق) کرونا ہوگا۔اگر سبسکرائبر دوبارہ تصدیق نہیں کرواتا ہے، تو ٹیلی کام کمپنی بغیر کسی اطلاع کے 60 دنوں کے اندر اس نمبر کو بلاک کر دے گی۔ اگر کوئی سبسکرائبر ہنگامی صورتحال جیسے ہسپتال میں یا  بیرون ملک میں ہے تو انھیں مزید 30 دن کی ڈیڈ لائن دی جائے گی۔

 

 

اگر سبسکرائبر مقررہ وقت کے اندر تصدیق نہیں کرواتا ہے۔ تو ایسی صورت میں نے ٹیلی کمیونیکیشن ڈپارٹمنٹ نے ٹیلی کام آپریٹرس کو فوری طور پر نمبر بلاک کرنے کی ہدایت دی ہے۔ سم استعمال کرنے والے دوبارہ تصدیق کے لیے ویب سائٹ https://dot.gov.in/ پر لاگ ان کرکے معلوم کرسکتے ہیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button