کیا آپ نے بلو آدھار کارڈ کا نام سنا ہے؟

حیدرآباد _ عام طور پر آدھار کارڈ ایک ہی  رنگ کا ہوتا ہے کیا آپ نے بلو آدھار کارڈ دیکھا ہے؟ یہ کارڈ کس کو جاری کیا جاتا ہے. باقاعدہ آدھار کارڈ اور  بلو آدھار کارڈ مختلف ہیں ۔ اسے بعل آدھار کارڈ بھی کہا جاتا ہے۔ یہ کارڈ UIDAI نے 2018 میں لانچ کیا تھا۔ یہ دیکھنے میں ہلکے بلو رنگ میں  ہوتا ہے۔ اسی لیے ہر کوئی اسے بلو آدھار کارڈ کہتے ہیں ۔

یہ کارڈ 5 سال سے کم عمر کے بچوں کو دیا جاتا ہے۔ اس کارڈ میں 12 ہندسوں کا منفرد شناختی نمبر بھی ہوتا ہے۔ اگر کارڈ ہولڈر کی عمر 5 سال سے تجاوز کر جائے تو نمبر غیر کارکرد ہو جاتا ہے۔
یہ کارڈ نوزائیدہ بچے سے  5 سال تک کے عمر کے بچوں کو لیا  جا سکتا ہے  اس کے لیے آپ کو اندراج فارم بھرنا ہوگا اور والدین کا شناختی کارڈ ، ایڈریس پروف ، رشتہ ، بچے کی تاریخ پیدائش کا ثبوت منسلک کرنا ہوگا۔ بلو آدھار کارڈ میں بائیو میٹرک معلومات نہیں ہوتے ۔ کیونکہ  5 سال سے کم عمر کے بچوں سے بایومیٹرک کی تفصیلات نہیں لی جاتی ہیں۔ بائیومیٹرک اپ ڈیٹ  5 سال عمر مکمل کرنے کے بعد حاصل کی جاتی ہیں ۔ یہ بائیو میٹرک 15 سال کی عمر تک کام آتا ہے۔ اس کے بعد بائیو میٹرک کو مزید ایک بار اپ ڈیٹ کرنے کی ضرورت ہوتی ہے۔

اگر آپ قریبی آدھار اندراج مرکز سے رجوع ہو کر مذکورہ دستاویزات پیش کرتے ہوئے  والدین کا فون نمبر دیںتے ہیں تو عملہ فوری بلو آدھار کارڈ کی   درخواست قبول کرے گا۔ تصدیق مکمل ہونے پر فون پر  ایک پیغام موصول ہوگا ۔ بلو آدھار کارڈ رجسٹریشن کے 60 دن کے اندر متعلقہ پتہ پر بھیج دیا جائے گا۔ ورنہ  آپ آدھار سنٹر جا کر اسے حاصل کر سکتے ہیں۔