تلنگانہ

تلنگانہ کے چیف منسٹر نے متوفی کسانوں کے خاندانوں میں فی کس 3 لاکھ روپے کی رقم تقسیم کردی

حیدرآباد-23مئی ( اردولیکس) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نےچندی گڑھ کے ٹیگور آڈیٹوریم میں متوفی کسانوں کے ارکان خاندان اور گلوان میں شہید فوجیوں کے ارکان خاندان میں مالی امداد کی تقسیم سے متعلق منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوۓ کہا کہ ملک بھر میں کسانوں کی جانب سے چلائی جانے والی تحریک کو ان کی حکومت مکمل تائید و حمایت کرے گی۔ اس تقریب میں دہلی کے چیف منسٹر اروند کجریوال اور پنجاب کے چیف منسٹر بھگونت مان سنگھ اور دوسرے موجود تھے اس موقع پر تین زرعی قوانین کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے دہلی کی سرحد پر فوت ہونے والے کسانوں کے ہر ایک خاندان میں فی کس 3 لاکھ روپے کے چیک حوالے کئے۔

انھوں نے کہا ہے کہ مرکزی حکومت کی مخالف کسان پالیسیوں کے خلاف ملک بھر کے کسانوں کو ایک پلیٹ فارم پر جمع ہونے کی شدید ضرورت ہے۔ انہوں نے کسانوں سے کہا کہ وہ اپنے آپ کو تنہا نہ سمجھیں ۔ ان کی تائید مسلسل کسانوں کے ساتھ رہے گی۔  اپنے خطاب کے دوران چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ نے مرکز کی نریندرمودی حکومت کی زرعی اور معاشی پالیسیوں کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت کو کسانوں کے ساتھ دوستانہ ماحول میں کام کرنا تھا لیکن وہ مختلف طریقوں سے کسانوں کو پریشان کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آزادی کے 75 سال گزر جانے کے بعد بھی کسانوں کے حقوق کے لئے اس طرح کے تقاریب کا اہتمام کرنا انتہائی دکھ کی بات ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button