تلنگانہ

اسمبلی میں مرکز کے زرعی قوانین کے خلاف قرارداد منظور کرنے چیف منسٹر تلنگانہ کا اعلان

حیدرآباد _ تلنگانہ کے چیف منسٹر چندرشیکھرراو نے مرکز کے سیاہ زرعی قوانین کے خلاف اسمبلی میں قرارداد منظور کرنے کا اعلان کیا ہے تلنگانہ بھون میں ٹی آرایس کے ارکان مقننہ کے ساتھ اجلاس منعقد کرنے کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے چیف منسٹر چندرشیکھرراو نے کہا کہ دھان کی خریدی کے مسلہ پر اپنے موقف کو واضح نہ کرتے ہوئے نریندر مودی حکومت کسانوں میں الجھن پیدا کررہی ہے

 

چیف منسٹر چندرشیکھرراو نے کہا کہ مودی حکومت کسانوں کی مخالف حکومت ہے سیاہ زرعی قوانین سے اب تک 600 کسانوں کی موت ہوگئی لیکن مرکزی حکومت ٹس سے مس نہیں ہورہی ہے انہوں نے کہا کہ جس طرح برقی ترمیمی بل کے خلاف تلنگانہ اسمبلی میں قرارداد منظور کی گئی تھی اسی طرح مرکزی حکومت کے زرعی قوانین کے خلاف بھی قرارداد منظور کی جائے گی۔چیف منسٹر نے کہا کہ 18 نومبر کو ٹی آر ایس کے وزراء، ارکان اسمبلی، کونسل اور ارکان پارلیمنٹ حیدرآباد کے اندرا پارک پر دھان کی خریدی کا مرکزی حکومت سے مطالبہ کرتے ہوئے دھرنا دیں گے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button