تلنگانہ

جڑچرلہ کے سابق رکن اسمبلی ایرا شیکھر بھائی کے قتل کیس میں بری

حیدرآباد_ 13 مئی ( اردولیکس) تلنگانہ کے جڑچرلہ اسمبلی حلقہ  کے سابق رکن اسمبلی ایرا شیکھر کو ایک خصوصی عدالت نے اپنے سگے  بھائی کے  قتل کیس میں مناسب ثبوت نہ ہونے کی وجہ سے ایرا شیکھر کو بری کردیا ۔ اسی طرح عدالت نے ایرا شیکھر کی بیوی بھوانی اور سات دیگر کو بھی ثبوت نہ ملنے کی بنیاد پر بری کر دیا۔

ایرا شیکھر کے بھائی ایرا جگن موہن کا  17 جولائی 2013 کوقتل کر دیا گیا تھا ۔ جگن موہن  کو دیوراکدرا بس اسٹینڈ کے قریب نامعلوم شخص کی فائرنگ سے موقع پر ہی ہلاک ہوگئے تھے۔ دیوراکدرا پولیس نے مقدمہ درج کر کے سابق رکن اسمبلی ایرا شیکھر، ان کی بیوی بھوانی اور سات دیگر کو گرفتار کر لیا تھا ۔ پولیس ایف ایس آئی آر کے مطابق، دیوراکدرا منڈل پدا چنتا کنٹا گاؤں کے سرپنچ کے انتخاب کے دوران ایرا شیکھر اور اس کے بھائی ایرا جگن موہن کے درمیان جھگڑا ہوا۔ ایرا شیکھر کی بیوی بھوانی نے سرپنچ کے عہدے کے لیے پرچہ نامزدگی داخل کیا تھا ۔ ایرا جگن موہن کی بیوی اشویتا نے بھی پرچہ نامزدگی داخل کیا جس پر تنازعہ کھڑا ہوگیا تھا دیوراکدرا پولیس نے جگن موہن قتل کیس میں ایرا شیکھر، بھوانی اور سات دیگر کے خلاف مقدمہ درج کیا تھا۔ کیس کی سماعت کرنے والی عوامی نمائندوں کی عدالت نے مناسب شواہد نہ ہونے کی وجہ سے کیس کو خارج کردیا اور تمام کو بری کردیا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button