تلنگانہ

حیدرآباد میں گاو رکھشکوں کی شر انگریزی _ کورٹ آرڈر بتانے پر بھی بڑے جانوروں کو روکنے کی کوشش

حیدرآباد۔23 جون ( اردولیکس) حیدرآباد کے علاقے ضیاء گوڑہ گاوشالہ کے پاس جمعرات کی رات اس وقت ہلکی کشیدگی پھیل گئی جب کورٹ کے ریلیز آرڈر رکھنے کے باوجود بڑے جانوروں کو چھوڑ نے پر شرپسندوں نے اعتراض کیا ۔

تفصیلات کے مطابق دو دن قبل ضلع کاماریڈی کے سداشیونگر سے بہادر پورہ علاقہ کو 28 بڑے جانور منتقل کئے جارہے تھے میٹر چپل چیک پوسٹ کے پاس گاور کھشکوں نے اس گاڑی کو روک دیا اور یہ کہتے ہوئے جانوروں کو گاڑی سے اتار کر گاوشالہ میں رکھ دیا کہ یہ تمام  گاۓ ہیں جب کہ اس میں بیل تھے۔

گاو رکھشکوں کے اعتراض پر جانوروں کے مالکین نے کورٹ سے ریلیز آرڈر حاصل کیا اور بڑے جانور لینے کے لئے گاوشالہ پہنچےتو وہاں گاور کھشکوں نے دانستہ طور پر پھر اس پر بھی اعتراض کرتے ہوۓ پر امن ماحول کو مکدر کرنے کی کوشش کی ۔ بعد ازاں پولیس نے وہاں پہنچ کر صورتحال پر قابو پالیا۔  عیدالاضحی سے قبل  گاؤ رکھشکوں کی جانب سے زبردستی مویشیوں کو روکے جانے پر حالات خراب ہونے کا اندیشہ ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button